Monday , September 25 2017
Home / دنیا / لندن میں پہلی بار ہندوستان کے جشن آزادی کی دوڑ

لندن میں پہلی بار ہندوستان کے جشن آزادی کی دوڑ

ہندوستانی بحرالکاہل میں امن میں اضافہ سے صدر امریکہ ڈونالڈ ٹرمپ اور وزیراعظم نریندر مودی متفق

لندن/واشنگٹن ۔15اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستانی برادری کے برطانیہ میں مقیم سینکڑوں ارکان آج پہلی بار یوم آزادی کے جشن کی دوڑ میں شرکت کیلئے سڑکوں پرن کل آئے ۔ ہندوستان کی 71ویں یوم آزادی تقریب کے سلسلہ میں ایک میل طویل اس دوڑ کا اہتمام کیا گیا تھا جس کا آغاز تاریخی پارلیمنٹ چوک سے ہوا ۔ دوڑ میں شرکت کرنے والے انڈیا۔70 ٹی شرٹس میں ملبوس تھے اور ترنگے لہرا رہے تھے ۔ ایک میل طویل دوڑ کا آغاز تاریخی چوک میں مہاتما گاندھی کے مجسمہ سے ہوا جو برطانیہ کے دارالحکومت کے قلب میں نصب کیا گیا ہے ۔ لندن میں ہندوستان کے ہائی کمشنر نے جھنڈی دکھاکر دوڑ کا آغاز کیا ۔ آدھی رات کے بعد ہندوستانی ہائی کمشنر برائے برطانیہ وائی کے سنہا نے تمام شرکاء کو چائے اور سموسے پیش کئے ۔ دوڑ کا آغاز پارلیمنٹ چوراہے میں مہاتما گاندھی کے مجسمہ سے ہوا اور انڈیا ہاؤز تک ایک میل کا فاصلہ طئے کیا گیا ۔ دوڑ کا اہتمام 70ویں یوم آزادی تقریب کے سلسلہ میں کیا گیا تھا ۔ گذشتہ 70سال میں پہلی مرتبہ اس قسم کی دوڑ دیکھی گئی ۔ دوڑ میں شریک ہونے والوں نے کہا کہ آزادی دوڑ ہندوستان کی کرپشن اور غربت سے آزادی کی جدوجہد کی علامت ہے ۔ دوڑ میں ریک ہونے والے جئے ہند ‘ بھارت ماتا کی جئے اور وندے ماترم کے نعرے لگارہے تھے ۔ ہندوستانی ڈپٹی ہائی کمشنر دنیش کے پٹنائیک نے حاضرین سے خطاب کیا ۔ اس دوڑ کا اہتمام ہندوستانی ہائی کمیشن برائے لندن کی جانب سے کیا گیا تھا اوراس کا مقصد ہندوستانی برادری کو پورے برطانیہ سے 70ویں جشن آزادی کے سلسلہ میں یکجا کرنا تھا ۔امکان ہے کہ یہ ایک سالانہ تقریب بن جائے گی اور ہر سال دوڑ منعقد ہوگی ۔

نریندر مودی اور ڈونالڈ ٹرمپ کی فون پر بات چیت
ہندوستان کی یوم آزادی پر ٹرمپ کی مبارکباد
واشنگٹن سے موصولہ اطلاع کے بموجب صدر امریکہ ڈونالڈ ٹرمپ اور وزیراعظم نریندر مودی متفق ہوگئے ہیں کہ ہندوستان بحرالکاہل کے علاقہ میں ایک نئے دوبدو وزارتی سطح کے مذاکرات کا اہتمام کیا جائے ۔ وائیٹ ہاوز کے بموجب ڈونالڈ ٹرمپ نے کل رات وزیراعظم نریندر مودی سے فون کر کے انہیں ہندوستان کے یوم آزادی کی مبارکباد پیش کی ۔ فون کال کے دوران ٹرمپ نے اظہار مسرت کیا کہ پہلی بار امریکی خام تیل ہندوستان کو روانہ کیا جارہا ہے اس سے دونوں کے ٹکساس میں مہینہ کا آغاز ہوگا ۔ انہوں نے عہد کیا کہ امریکہ ہندوستان کو طویل عرصہ تک خام تیل اور توانائی فراہم کرے گا ۔ وائٹ ہاؤز سے جاری کردہ بیان میں دونوں قائدین کی باہمی بات چیت کا متن جاری کیا گیا ہے ۔ دونوں قائدین نے عہد کیا قائدین نے کہاکہ وہ عالمی صنعت کاری چوٹی کانفرنس کے منتظر ہیں جو جاریہ سال نومبر میں ہندوستان میں منعقد کی جائے گی ۔ وہائٹ ہاؤز کے بیان میں کہا گیا ہے کہ صدر امریکہ ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنی دختر اور مشیر ایوانکا ٹرمپ سے خواہش کی ہے کہ وہ چوٹی کانفرنس میں امریکی وفد کی قیادت کریں ۔ وزیراعظم نریندر مودی نے صدر امریکہ ڈونالڈ ٹرمپ کی طاقتور قیادت کی وجہ سے پوری دنیا کو شمالی کوریا کی لعنت کے خلاف متحد کردینے پر ان کا شکریہ ادا کیا ۔ ڈونالڈ ٹرمپ نے حال ہی میں شمالی کوریا کو انتباہ دیا ہے کہ اُسے ’’ شعلہ پشانی اور برہمی ‘‘ کا سامنا کرنا پڑے گا ‘ اگر وہ امریکہ پر حملہ کرے ۔ شمالی کوریا نے دھمکی دی ہے کہ وہ اپنے میزائل کی آزمائشی پرواز جاپان پر کرے گا اور اس کا رخ امریکی بحرالکاہل کا جزیرہ گوام کی طرف ہوگا ۔

TOPPOPULARRECENT