Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / لوئیسانیہ میں شدید بارش ‘ سیلاب ‘ ایک شخص ہلاک ‘ ایمرجنسی نافذ

لوئیسانیہ میں شدید بارش ‘ سیلاب ‘ ایک شخص ہلاک ‘ ایمرجنسی نافذ

نیو اورلیانس 13 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) وسطی امریکہ کے خلیج ساحل پر شدید بارش کا سلسل جاری ہے جس کے نتیجہ میں درجنوں افراد اپنے گھروں میں پھنس گئے ہیں اور یہاں کمر برابر پانی جمع ہوگیا ہے ۔ بارش سے متعلق واقعات میں ایک فرد ہلاک ہوگیا جو سیلاب کے پانی میں پھنس گیا تھا ۔ لوئیسانیہ کے گورنر جان بیل ایڈورڈز نے یہاں ایمرجنسی نافذ کردی ہے اور بچاؤ کارکن جنوب مغربی حصوں میں مزید بارش کے اندیشوں کا شکار ہیں۔ ایڈورڈز صورتحال کا بذات خود جائزہ لینے اور راحت کاری و بچاؤ کاموں کی نگرانی کیلئے آج ہی لوئیسانیہ پہونچ رہے ہیں۔ وہ ڈیموکریٹک گورنرس اسوسی ایشن کے ایک اجلاس میں شرکت کیلئے کولوراڈو میں تھے ۔ قومی خدمات موسمیات نے اطلاع دی ہے کہ جنو مشرقی لوئیسانیہ اور جنوبی مسی سپی میں کئی دریائیں خطرہ کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہیں اور ان کے کناروں پر دور دور تک پانی جمع ہوگیا ہے ۔ شدید بارش کا سلسلہ کل سے ہنوز جاری ہے ۔ مشرقی بیٹن راگ پارش کے شیرف کے دفتر سے ایک ترجمان نے بیان جاری کرتے ہوئے بتایا کہ زچاری شہر کے قریب ایک پانی سے بھرے ہوئے گڑھے میں پھسل کر گرجانے کے نتیجہ میں ایک فرد ہلاک ہوگیا ہے ۔ متوفی کی 68 سالہ ولیم مے فیلڈ کی حیثیت سے شناخت ہوئی ہے ۔ اس کی نعش آج دو پہر کے قریب دستیاب ہوگئی ہے ۔ شیرف کے دفتر نے اس موت کو حادثاتی موت قرار دیا ہے ۔ لوئیسانیہ گورنر کے دفتر کے ایک ترجمان نے بتایا کہ کئی مقامات پر پانی جمع ہوجانے کی اطلاعات مل رہی ہیں اور لوگ مدد کیلئے خواہش کر رہے ہیں ۔ وہ سرکاری گاڑیوں ‘ کشتیوں وغیرہ کی فراہمی پر زور دے رہے ہیں۔ صرف ایک شہر میں سینکڑوں ریتی کے تھیلوں کی خواہش کی گئی ہے ۔ تقریبا سارے جنوبی لوئیسانیہ میں اتوار کی صبح تک بھی سیلاب کا خطرہ برقرار رہنے کے اندیشے ظاہر کئے گئے ہیں۔ محکمہ موسمیات کے دفتر نے بتایا کہ اتوار کی دوپہر تک 3 تا 5 انچ اضافی بارش ہوسکتی ہے ۔ جنوبی الباما میں بھی آج سیلاب کے اندیشوں کا اظہار کیا گیا ہے تاہم یہاں بارش کی شدت میں کمی واقع ہوئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT