Wednesday , August 23 2017
Home / سیاسیات / لوک سبھا میں سشماسوراج کے بیان کی ستائش

لوک سبھا میں سشماسوراج کے بیان کی ستائش

آج وزیرخارجہ کا دن ، اسپیکر کے ریمارکس پر ایوان میں قہقہوں کی گونج
نئی دہلی ۔ 9 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) وزیرخارجہ سشماسوراج نے آج کہا کہ بیرونی ممالک میں رہنے والے تمام ہندوستانیوں کی فلاح و بہبود ان کی حکومت کی ترجیح ہے اور انہیں درپیش مسائل کی یکسوئی کیلئے ہمہ گیر مساعی کی جاتی ہے۔ سشماسوراج نے جو این آر آئیز کے مختلف مسائل پر لوک سبھا میں سوالات کا جواب دے رہی تھیں کہا کہ ’’جب کبھی کوئی مسئلہ میرے علم میں لایا جاتا ہے میں شخصی طور پر اس کی یکسوئی کیا کرتی ہوں۔ کسی ہنگامی یا ناگہانی واقعہ میں اندرون 24 گھنٹے مسئلہ حل کیا جاتا ہے‘‘۔ سشماسوراج نے کہاکہ ’’ان حالات میں میں کسی شخص کی زبان، ذات پات، مذہب یا ریاست کو نہیں دیکھتی۔ میرے لئے یہ تمام ہندوستانی ہی ہیں‘‘۔ انہوں نے اعتماد کا اظہار کیا کہ ان کے تمام مسائل حل کئے جائیں گے۔ سشماسوراج کے بیان کا حکمراں جماعتوں کے علاوہ بشمول بائیں بازو محاذ دیگر چند اپوزیشن جماعتوں کے ارکان نے بھی میز تھپتھپا کر خیرمقدم کیا، جس کے جواب میں اسپیکر سمترا مہاجن کو یہ کہتے ہوئے سنا گیا کہ ’’آج وزیر (سشماسوراج) کا دن ہے‘‘۔ آر جے ڈی کے خارج شدہ رکن پارلیمنٹ راجیش رنجن نے سشماسوراج کی جانب سے ہندی میں سوالات کا جواب دیئے جانے کا خیرمقدم کیا، جس پر سمترا مہاجن نے ریمارک کیا کہ راجیش کی بیوی اور کانگریس کی رکن پارلیمنٹ رنجیتا راجن پر موٹر سیکل سشماسوراج کو دیں گی، جس پر سارے ایوان میں زوردات قہقہے بلند ہوئے۔ رنجیتا کل یوم خواتین کے موقع پر موٹرسیکل چلاتی ہوئی پارلیمنٹ پہنچی تھیں۔

TOPPOPULARRECENT