Saturday , October 21 2017
Home / جرائم و حادثات / لڑکیوں اور خواتین سے چھیڑچھاڑ کا شاخسانہ

لڑکیوں اور خواتین سے چھیڑچھاڑ کا شاخسانہ

ا23 افراد بشمول خانگی ٹیچر اور طلبہ گرفتار، شی ٹیم کی کارروائی

حیدرآباد ۔ /14 جولائی (سیاست نیوز) لڑکیوں و خواتین سے چھیڑ چھاڑ کا انسداد دستہ (شی ٹیم ) نے 23 افراد بشمول خانگی ٹیچر اور طالبعلموں کو گرفتار کرلیا جو ہراسانی کے واقعات میں  ملوث پائے گئے ۔ شی ٹیمس نے شہر کے مختلف عوامی مقامات ، گرلز کالجس ، زو ، اسکولس اور بس اسٹاپس کے قریب خصوصی کارروائی کرتے ہوئے ایسے افراد کی نشاندہی کی جو لڑکیوں سے چھیڑ چھاڑ میں ملوث پائے گئے ۔ تفصیلات کے بموجب شی ٹیمس نے موبائیل فون پر ہراساں کرنے والے این ریڈی کرن اور کے رمیش جو سم کارڈس کا کاروبار کرتے ہیں کو گرفتار کرلیا جنہوں نے خواتین کو قابل اعتراض ایس ایم ایس اور فون کالس کے ذریعہ خواتین کو ہراساں کررہے تھے ۔ اسی قسم کے ایک اور واقعہ میں گنگا نگر یاقوت پورہ کے ساکن محمد سلیم الدین کو شی ٹیم نے ایک شادی شدہ خاتون کو مسلسل فون کرکے اور اسے واٹس اپ کے ذریعہ ہراساں کررہا تھا ۔ شی ٹیم نے اسے گرفتار کرکے عدالت میں پیش کردیا ۔ شہر کے مصروف ترین علاقے دلسکھ نگر میں بھی شی ٹیم نے دو افراد اے رویندر یادو اور جی پرمیش کو اس وقت گرفتار کرلیا جب یہ لوگ لڑکیوں کا پیچھا کرکے انہیں چھیڑ رہے تھے ۔ اسکولس کے قریب لیمن سوڑا کا کاروبار کرنے والے جنگم سنگپا کو اس وقت گرفتار کرلیا جب وہ اسکول طالبات کو لو لیٹرس لکھ کر انہیں ہراساں کررہا تھا ۔ سنگپا کے مسلسل ہراسانی سے کئی طالبات نے اسکول جانے سے انکار کردیا تھا جس کا پتہ لگنے پر والدین نے اس کے خلاف شی ٹیم میں شکایت درج کروائی اور اسے فوری گرفتار کرلیا گیا ۔ ایک اور واقعہ میں آٹھویں جماعت کی طالبہ کو ایس ایم ایس اور فون  کالس کے ذریعہ مسلسل ربط میں رہنے پر مجبور کرنے والے ریاضی کے خانگی ٹیچر کو شی ٹیم نے گرفتار کرلیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ 33 سالہ این وجئے کمار ساکن سنتوش نگر چندرائن گٹہ کی ساکن طالبہ کو اپنی ماں کے فون سے مسلسل ایس ایم ایس اور فون کالس کرنے پر مجبور کررہا تھا جسے دیکھ کر طالبہ کی بڑی بہن نے شی ٹیم سے شکایت درج کروائی اور اسے فوری گرفتار کرلیا گیا ۔ سینٹ فرانسیس گرلز کالج کاچی گوڑہ اور بہادر پورہ زو پارک کے قریب لڑکیوں سے چھیڑ چھاڑ کرنے اور بائیک ریسنگ کے ذریعہ بدنظمی پھیلانے والے 13 افراد بشمول 11 کم عمر لڑکوں کو شی ٹیم نے گرفتار کرلیا ۔ کم عمر لڑکوں کو بعد کونسلنگ رہا کردیا گیا جبکہ دیگر کے خلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے انہیں عدالت میں پیش کیا گیا ۔ ایڈیشنل کمشنر پولیس کرائمس شریمتی سواتی لکرا نے بتایا کہ آج کی خصوصی کارروائی میں شی ٹیم نے چھیڑ چھاڑ میں ملوث ہونے والے افراد و نوجوانوں کے خلاف ویڈیو گرافی کے ذریعہ ثبوت اکٹھا کیا ہے اور ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی ۔

TOPPOPULARRECENT