Sunday , October 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / لیسٹر سٹی 132 سال میں پہلی مرتبہ پریمیئر لیگ چمپین

لیسٹر سٹی 132 سال میں پہلی مرتبہ پریمیئر لیگ چمپین

لندن۔3 مئی (سیاست ڈاٹ کام)یہاں اسٹیمفورڈ برج میدان میں چیلسی اور ٹوٹنہم ہوٹسپر کے درمیان کھیلے گئے میچ کیلئے ٹیموں کے جدول پر دوسرے نمبر پر موجود ٹوٹنہم کو خطاب کے لئے پسندیدہ قرار دیا جا رہا تھا اور اس نے 35ویں منٹ میں ہیری کین کے گول کی بدولت اس بات کو درست ثابت کردیا۔ٹوٹنہم کو لیگ کا خطاب جیتنے کی امیدیں برقرار رکھنے کیلئے اس میچ میں کامیابی درکار تھی کیونکہ لیسٹر پہلے ہی آٹھ نشانات کی برتری حاصل کیے ہوئے تھی۔ میچ کا پہلا ہاف ختم ہونے سے ایک منٹ قبل ٹوٹنہم کے سون ہیونگ من نے گیند کو گول کی راہ دکھا کر اپنی ٹیم کو2-0 کی برتری دلانے کے علاوہ مضبوط موقف میں لا کھڑا کیا۔ تناؤ سے بھرپور اس مقابلے میں متعدد مرتبہ ریفری کو کھلاڑیوں کے درمیان بیچ بچاؤ کروانا پڑا اور حتیٰ کہ میچ کے ہاف کے درمیان دونوں ٹیمیں ایک دوسرے سے دست و گریباں ہو گئیں اور ریفریز کو بیچ بچاؤ کیلئے آنا پڑا۔ دوسرا ہاف شروع ہوا تو 58ویں منٹ میں گیری کیہل نے چیلسی کیلئے گول کر کے اپنے شائقین کے ساتھ ساتھ لیسٹر کے شائقین اور ٹیم کو بھی نئی توانائی بخشی۔ چیلسی نے خسارہ کم کیا تو ٹوٹنہم نے ایک مرتبہ پھر اپنی برتری دگنی کرنے کی کوششیں شروع کردیں لیکن 83ویں منٹ میں ایڈن ہیزارڈ نے خوبصورت گول کر کے مقابلہ 2-2 سے برابر کرنے کے ساتھ ٹوٹنہم کی چیمپین بننے کی امیدوں پر بھی پانی پھیردیا اور اس کے بعد انتہائی کوششوں کے باوجود بھی وہ گول کرنے سے قاصر رہے۔ جب ریفری نے میچ ختم کرنے کی سیٹی بجائی تو اسکور بورڈ پر 2-2 کا ہندسہ ٹوٹنہم کی دہری شکست اور لیسٹر کے چیمپیئن بننے کا اعلان کررہا تھا۔

 

انگلش پریمیئر لیگ کی نئی چیمپیئن لیسٹر اب تک 36 میچوں میں 77 نشانات کے ساتھ سرفہرست ہے جبکہ ٹوٹنہم ہوٹسپر 36 میچوں میں 70 نشانات کے ساتھ دوسرے نمبر پر موجود ہے۔ یاد رہیکہ جب انگلش پریمیئر لیگ کا نیا سیزن شروع ہوا تو اکثر لوگ چیلسی کو خطاب کے دفاع کیلئے پسندیدہ قرار دے رہے تھے جبکہ متعدد لوگ مانچسٹر سٹی کو اس مرتبہ لیگ کا چیمپین بنتے دیکھنا چاہتے تھے۔ لیکن جہاں لیگ کے آغاز میں دفاعی چیمپیئن چیلسی کے بدترین کھیل نے شائقین کو شدید مایوسی سے دوچار کیا تو دوسری جانب کسی کرشمہ کی مانند ابھرنے والی لیسٹر کی ٹیم نے اپنے شاندار کھیل سے شائقین کے دل موہ لئے۔ گزشتہ سیزن میں جب لیسٹر نے 17واں مقام حاصل کی تو کسی کو حیرت نہ ہوئی کیونکہ ایک سیزن قبل ہی اس نے سیکنڈ ڈویژن کی چیمپیئن شپ کھیلی تھی اور ان کیلئے لیگ کی فرسٹ ڈویژن کھیلنا ہی اپنے آپ میں بڑا کارنامہ تھا۔لیگ کے 2015-16 کے سیزن میں بڑی بڑی ٹیموں کو مات دے کر پسندیدہ ٹیم کی شکل اختیار کرنے والی لیسٹر نے بالآخر تاریخ رقم کرتے ہوئے انگلش پریمیئر لیگ کا چیمپیئن بننے کا 132 سال میں پہلی مرتبہ اعزاز اپنے نام کر لیا۔

TOPPOPULARRECENT