Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / مائنمار کے حالات سے تلنگانہ کے مسلمان بے چین

مائنمار کے حالات سے تلنگانہ کے مسلمان بے چین

انسداد واقعات کیلئے وزیراعظم و وزیرخارجہ سے نمائندگی کا تیقن، محمد محمود علی کی مختارعباس نقوی سے ملاقات
حیدرآباد۔/9ستمبر، ( سیاست نیوز) مرکزی وزیر اقلیتی اُمور مختار عباس نقوی نے ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کو تیقن دیا کہ وہ مائنمار میں مسلمانوں کے ساتھ پیش آرہے واقعات کی روک تھام کے سلسلہ میں وزیر اعظم نریندر مودی اور وزیر خارجہ سشما سوراج کی توجہ مبذول کرائیں گے۔ محمد محمود علی نے آج نئی دہلی میں مختار عباس نقوی سے ملاقات کی اور مائنمار کی صورتحال کے علاوہ دیگر اُمور پر تبادلہ خیال کیا۔ انہوں نے کہا کہ مائنمار کے مسلمانوں کے حالات نے تلنگانہ کے مسلمانوں کو بے چین کردیا ہے اور وہ حکومت کے نمائندہ کے علاوہ مسلمانوں کے نمائندہ کی حیثیت سے مرکز سے نمائندگی کیلئے پہنچے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان کے تمام مسلمان اس صورتحال پر بے چین ہیں اور انہیں امید ہے کہ ہندوستان اس صورتحال پر قابو پانے کیلئے مائنمار پر اپنا اثر و رسوخ استعمال کرسکتا ہے۔ محمود علی نے کہا کہ مرکزی وزارت ہو کہ ریاستی کابینہ اس میں شامل مسلم نمائندوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنی قوم پر ہونے والے مظالم کے سلسلہ میں آواز اٹھائیں۔ اسی جذبہ کے تحت انہوں نے سشما سوراج اور سعودی عرب اور بنگلہ دیش کے سفارتکاروں سے ملاقات کی۔ محمود علی نے کہا کہ ہندوستان کو چاہیئے کہ وہ یہاں مقیم پناہ گزینوں کے ساتھ نرمی کا رویہ اختیار کرے اور انہیں جبراً ملک سے جانے کیلئے اصرار نہ کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ بنگلہ دیش میں جو پناہ گزین موجود ہیں ان کی امداد کیلئے ہندوستانی حکومت کو آگے آنا چاہیئے۔ مختار عباس نقوی نے محمود علی کے جذبات سے خود کو ہم آہنگ کرتے ہوئے کہا کہ وہ خود بھی مائنمار کی صورتحال کے بارے میں فکر مند ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ بہت جلد وزیر اعظم اور وزیر خارجہ سے اس مسئلہ پر بات چیت کریں گے۔ محمود علی نے درگاہ حضرت خواجہ معین الدین چشتی ؒ اجمیر شریف کی کمیٹی میں تلنگانہ کو نمائندگی دینے کی خواہش کی جس پر مختار عباس نقوی نے کمیٹی کی تشکیل کے موقع پر تلنگانہ کو شامل کرنے کا تیقن دیا۔ انہوں نے تلنگانہ میں مرکزی اسکیمات پر موثر عمل آوری کے سلسلہ میں مرکزی وزارت سے فنڈز کی اجرائی سے اتفاق کیا۔ مختار عباس نقوی نے کہا کہ وہ عنقریب حیدرآباد کا دورہ کرتے ہوئے مرکزی اسکیمات پر عمل آوری کا جائزہ لیں گے ۔ اس کے علاوہ تلنگانہ کو درکار فنڈز کے سلسلہ میں بھی بات چیت کی جائے گی۔ مرکزی وزیر نے حج 2017 کے سلسلہ میں مرکزی حکومت اور سعودی حکومت کی جانب سے کئے گئے موثر انتظامات کا حوالہ دیا اور کہا کہ روانگی اور واپسی کے سلسلہ میں ہندوستانی حکومت نے تمام امبارگیشن پوائنٹس پر موثر انتظامات کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سعودی حکومت کے بہتر انتظامات کے سبب ایام حج میں کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے کابینی درجہ ملنے پر مختار عباس نقوی کو مبارکباد پیش کی۔

 

TOPPOPULARRECENT