Monday , August 21 2017
Home / دنیا / مارکوس کی تدفین پر فلپائن میں احتجاج

مارکوس کی تدفین پر فلپائن میں احتجاج

منیلا ۔ 14اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) منیلا میں صدر فلپائن راڈریگوڈٹرٹ کے مارکوس کی تدفین کے منصوبہ پر اختلافات کے نتیجہ میں احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ شروع ہوگیا ۔ صدر فلپائن آنجہانی ڈکٹیٹر فرڈیننڈ مارکوس کی سرکاری اعزازات کے ساتھ تدفین کرنا چاہتے تھے ۔ صدرفلپائن مارکوس کے آبائی قصبہ میں قومی سورماؤں کے قبرستان میںانہیں دفن کرنا چاہتے تھے ۔ چار ارکان پارلیمنٹ نے منیلا کے جلوس میں شرکت کی ۔ ان میں سے ایک ریزاہونٹی ویراس نے کہا کہ ہم پوری دنیا کے مذاق کا نشانہ بن جائیں گے کیونکہ مارکوس ہمارے ملک کے سورماؤں کے اتنے کٹر دشمن تھے جس کی ماضی میںکوئی مثال نہیں ملتی ۔ مارکوس کے خاندان نے اس کی محفوظ نعش 1989ء میں جلاوطنی کے دوران ہلاک ہونے کے بعد محفوظ کر کے نمائش کے لئے رکھی تھی ۔ تین سال قبل فلپائن میں عوامی انقلاب آیا تھا ۔ آج ان کی تدفین پورے سرکاری اعزاز کے ساتھ سورماؤں کے قبرستان میں کرنے کا مطالبہ بھی کیا گیا تھا ۔ وہ 1965ء میں صدر فلپائن منتخب ہوئے اور 1972ء میں انہوں نے مارشل لاء نافذ کردیا جس کے نتیجہ میں وہ ڈکٹیٹر بن گئے ۔ ان کے ارکان خاندان اور حلیف زبردست کرپشن اور اُن کے فوجیوں کی بے رحمی کے نتیجہ میں مالدار ترین ہوگئے تھے لیکن ڈٹرٹ جو خود کو مخالف کرپشن جدوجہد کرنے والا ظاہر کرتے ہیں مارکوس کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ ان کے والد نے مارکوس کی کابینہ میں خدمات انجام دی ہیں اور خود انہوں نے قبل ازیں مارکوس کی تائید میں ووٹ دیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT