Sunday , July 23 2017
Home / سیاسیات / ماہِ ڈسمبر تاملناڈو کے لئے ’ ستمگر ‘ بن گیا

ماہِ ڈسمبر تاملناڈو کے لئے ’ ستمگر ‘ بن گیا

ایم جی آر اور جیہ للیتا کی موت، سونامی اور بارش کی تباہ کاریاں
چینائی۔/6ڈسمبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) یہ باور کیا جاتا ہے کہ ماہ ڈسمبر تاملناڈو کیلئے راس نہیں آتا اور اس ماہ میں کوئی نہ کوئی المناک واقعہ پیش آتا ہے جبکہ انا ڈی ایم کے سربراہ اور چیف منسٹر جے للیتا کا نام سربرآوردہ شخصیتوں کی فہرست میں شامل تھا۔ سال کے آخری ماہ میں یہ نام حذف ہوگیا۔ انا ڈی ایم کے بانی اور کرشماتی اداکار سے سیاستداں بننے والے ایم جی آر کا بھی 24 ڈسمبر 1987 میں انتقال ہوگیا تھا جبکہ ان کی جانشین جیہ للیتا نے کل شب ( 5 ڈسمبر ) آخری سانس لی۔ اس طرح دو المناک واقعات ایک ہی ماہ میں پیش آئے۔ یہ بھی ایک اتفاق ہے کہ دونوں قائدین ( ایم جی آر۔ جیہ للیتا ) طویل عرصہ تک زندگی اور موت کی جنگ لڑتے رہے۔ علاوہ ازیں ہندوستان کے آخری گورنر جنرل سی راجگوپال اچاری کا 25ڈسمبر 1972 کو انتقال ہوگیا تھا جبکہ معقولیت پسند لیڈر پیریار ای راما سوامی کی موت 24ڈسمبر 1972 کو واقع ہوئی تھی۔ دونوں کی عمر بھی 94سال تھی۔قدرت نے بھی سال کے آخری ماہ میں ریاست کے عوام پر قہر ڈھایا تھا ہلاکت خیز سونامی 26ڈسمبر 2004 کو تباہی مچائی تھی جبکہ ڈسمبر 2015 میں موسلادھار بارش کی تباہ کاریاں آج بھی چینائی، کانچی پورم، کڈلورو، تریولور اور تھوڑا کڈی کے شہریوں میں خوفناک یاد بن کر رہ گئی ہیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT