Tuesday , August 22 2017
Home / ہندوستان / متوازی ایوان چلانے والوں سے جواب طلب کیا جائیگا

متوازی ایوان چلانے والوں سے جواب طلب کیا جائیگا

لکھنؤ۔ 26 جولائی ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) اترپردیش اسمبلی میں برسراقتدار پارٹی اور اپوزیشن میں چل رہی تکرار کے درمیان اسپیکر ہردے نارائن دکشت نے کہا ہے کہ گذشتہ 24 جولائی کو متوازی ایوان چلانے والوں سے جواب طلب کیا جائے گا۔مسٹر دیکشت نے کہا کہ 24 جولائی کو جن لوگوں نے متوازی ایوان چلائی تھی، ان کے خلاف کارروائی کرنے سے قبل ان کا جواب آنا ضروری ہے تاکہ پہلے انہیں نوٹس جاری کیا جاسکے ۔ ان سے پوچھا جائے گا کہ قانون ساز عمارت کے احاطے کے اندر کن حالات میں متوازی ایوان چلایا گیا۔ اس سے قبل پارلیمانی امور کے وزیر سریش کھنہ نے متوازی ایوان چلانے والوں کے خلاف کارروائی کرنے کی اپیل اسپیکر سے کی تھی۔غور طلب ہے کہ وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ پر دھمکانے کا الزام لگاتے ہوئے اپوزیشن نے گزشتہ 20 جولائی سے ایوان کا بائیکاٹ کر رکھا ہے ۔بھارتیہ جنتا پارٹی کے ممبران اسمبلی متھرا پرساد پال کو 24 جولائی کو خراج تحسین پیش کرتے وقت بھی ایوان میں اپوزیشن موجود نہیں تھی ۔ اپوزیشن نے ایوان کے ہی قریب واقع سینٹرل ہال میں متوازی ایوان چلا کر متھرا پرساد پال کو خراج عقیدت پیش کی تھی۔متوازی ایوان میں بہوجن سماج پارٹی کے لیڈر لال جی ورما نے صدر کا کردار ادا کیا تھا، جبکہ کانگریس کے اجے کمار للو ایوان کے لیڈراور سماج وادی پارٹی کے رام گووند چودھری اپوزیشن لیڈر کے کردار میں تھے ۔

TOPPOPULARRECENT