Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / مجلس کے ٹکٹ کے خواہاں امیدواروں کو شدید مایوسی اور ناراضگی

مجلس کے ٹکٹ کے خواہاں امیدواروں کو شدید مایوسی اور ناراضگی

حیدرآباد ۔ 16 ۔ جنوری : ( سیاست نیوز) : مجلس کے ٹکٹ کے حصول کے خواہش مندوں پر آج خوشی و غم کے بادل منڈلاتے رہے اور بعض امیدواروں کو اس وقت سخت مایوسی کا سامنا کرنا پڑا جب انہیں حوالہ کردہ بی فارمس واپس حاصل کرلیے گئے ۔ اسی خوشی و غم کے ماحول کے دوران آج مجلس اتحاد المسلمین کی قیادت نے شہر کے بیشتر حلقوں کے امیدواروں کو بی فارمس حوالے کردئیے ۔ آج جن امیدواروں کے نام سامنے آئے ہیں ان میں پتھر گٹی سے سہیل محمود قادری ، رین بازار سے واجد علی خاں ، بوئن پلی سے علی محمد عمر ، مہدی پٹنم سے ماجد حسین ، للیتا باغ سے محمد اعظم شریف ، مشیر آباد سے محمد عقیل ، دارالشفاء سے ریاض الحسن آفندی ، رحمت نگر سے نوین یادو ، وجئے نگر کالونی سے سلمیٰ آمینہ ، آصف نگر سے فہمینہ انجم ، شیخ پیٹ سے ارشد فراز ، کنچن باغ سے ریشمہ فاطمہ ، اپوگوڑہ سے فہد بن عبداد ، سنتوش نگر سے مظفر حسین ، چندرائن گٹہ سے عبدالوہاب ، بودھا نگر سے سلیم حسین ، عنبر پیٹ سے محمد ، گول ناکہ عنبر پیٹ سے سکینہ بیگم کے علاوہ دیگر شامل ہیں ۔ دارالسلام میں آج بھی دن بھر امیدواروں کی آمد و رفت جاری رہی ۔ بعض علاقوں کے صدور معتمدین کی جانب سے کھل کر ناراضگی کا اظہار کیا جارہا ہے اور یہ کہا جارہا ہے کہ جماعت کے حقیقی کارکنوں کو نظر انداز کیا گیا اور درخواستیں طلب کرتے ہوئے ان کے ساتھ مذاق کیا گیا ۔ کئی دعویداروں کو آج دن میں بھی انٹرویو کے لیے طلب کیا گیا لیکن بیشتر کو مایوسی کا سامنا کرنا پڑا ۔ ذرائع کے بموجب مجلس کی جانب سے بلدی انتخابات میں 73 امیدوار میدان میں اتارے جارہے ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT