Sunday , July 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / محمدعرفان کے خلاف تحقیقات‘شرجیل اور خالد کو نوٹس

محمدعرفان کے خلاف تحقیقات‘شرجیل اور خالد کو نوٹس

لاہور۔13فرروی (سیاست ڈاٹ کام )پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیئرمین شہریار خان نے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات میں رواں پاکستان سوپر لیگ کے دوران سٹہ بازوں سے روابط کے الزام میں محمد عرفان کے خلاف تحقیقات جاری ہیں جبکہ اسی الزام میں معطل کئے جانے والے شرجیل خان اور خالد لطیف کو وجہ نما نوٹس جاری کر دیے گئے ہیں۔لاہور میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے شہریار خان نے یہ بھی کہا کہ ابتدا میں جن دیگر دو کھلاڑیوں شاہ زیب حسن اور ذوالفقار بابر کے خلاف تحقیقات کی گئیں انھیں اس سلسلے میں کلین چٹ دے دی گئی ہے۔شہریار خان نے انکشاف کیا کہ جس شام معطل کئے جانے والے کھلاڑیوں نے مشتبہ افراد سے ملاقات کی اسی دوپہر انھیں اینٹی کرپشن یونٹ کی جانب سے لیکچر دیا گیا تھا۔خیال رہے کہ پاکستان سوپر لیگ کے دوسرے ایڈیشن کے آغاز کے دوسرے ہی دن ٹورنمنٹ کی انتظامیہ نے اسلام آباد یونائیٹڈ سے تعلق رکھنے والے بیٹسمینوں شرجیل خان اور خالد لطیف کو معطل کر دیا تھا۔ ان دونوں کھلاڑیوں کے خلاف یہ کارروائی ایک بین الاقوامی سنڈیکیٹ سے مبینہ طور پر ان کے رابطے کے بعد عمل میں آئی جو پاکستان سوپر لیگ کو متاثر کرنے کی کوشش کر رہا تھا۔معطلی کے بعد ان دونوں کھلاڑیوں کو واپس پاکستان بھیج دیا گیا اور اب پی سی بی کے چیئرمین نے کہا ہے کہ انھیں شوکاز نوٹس جاری کر دیا گیا ہے۔ شہریار خان نے کہا کہ ان دونوں کھلاڑیوں کو اپنے دفاع اور موقف بیان کرنے کا مکمل موقع دیا جائے گا۔ محمد عرفان اگرچہ تاحال زیرِ تفتیش ہیں تاہم انھیں ابھی تک شوکاز نوٹس جاری کرنے کا کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا۔پاکستان سوپر لیگ کا آغاز جمعرات کو اسلام آباد یونائیٹڈ اور پشاور زلمی کے درمیان میچ سے ہوا تھا جس میں شرجیل خان اور محمد عرفان اسلام آباد یونائیٹڈ کی ٹیم میں شامل تھے جبکہ خالد لطیف یہ میچ نہیں کھیلے تھے۔چیئرمین شہریار خان نے پاکستان سوپر لیگ (پی ایس ایل) کے دوران فکسنگ اسکینڈل پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کھیل کی بدنامی کا سبب بننے والے مجرمان سے سختی سے نمٹنے کا اشارہ دے دیا۔میڈیا کی رپورٹ کے مطابق، پی سی بی کے چیئرمین شہریار خان نے کہا کہ اس معاملے کی وسیع پیمانے پر تفتیش جاری ہے اور ایک مرتبہ اسپاٹ فکسنگ یا میچ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں کی نشاندہی ہو جائے تو انہیں مثالی سزائیں دینے کے کمیشن قائم کیا جائے گا

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT