Sunday , September 24 2017
Home / مذہبی صفحہ / محمد رضوان اللہ یزدانی نقشبندی حضرت پیر سید قدرت اللہ شاہ قادری

محمد رضوان اللہ یزدانی نقشبندی حضرت پیر سید قدرت اللہ شاہ قادری

سات حسنی و حسینی قادری بزرگ حضرات ہندوستان تشریف لائے جو سبع سیارگان ہفت اختر کے نام سے مشہور ہیںاور جن کے ابر کرم سے ہند کاگوشہ گوشہ فیضیاب ہوا ۔ حضرت پیر سید شاہ قدرت اللہ قادریؒ سے تیرہویں واسطے پر حضرت سیدشاہ ابوالحسن قادری بیجاپوریؒ ہیں جو ان سات حسنی و حسینی قادری بزرگوں میں سے ایک ہیں ۔حضرت قبلہؒ کا اسم مبارک سید شاہ قدرت اﷲ اور والد ماجد کا نام حضرت سید شاہ غلام غوث قادریؒ تھا ۔ جداعلیٰ حضرت پیر سید غلام محی الدین قادری قبلہؒ تھے ۔ چھبیسویں پشت میں حضرت سیدنا شیخ عبدالقادر جیلانی غوث اعظم دستگیری سے اور اڑتیسویں پشت میں خلیفہ چہارم حضرت سیدنا علی کرم اللہ وجہہؒ سے آپ کا سلسلۂ نسب جاملتا ہے ۔ حضرت قدرت اللہ قادری معرفت اور فیض کا سمندر تھے ۔ آپ ؒ فرماتے شریعت کا مقام ناسوت ، طریقت کا مقام ملکوت ، معرفت کا مقام جبروت اور حقیقت کا مقام لاہوت ہے ۔ طالبان حق عقیدت و محبت کے ساتھ آپؒ کے آگے سرنیاز جھکاتے اور فیض حاصل کرتے ۔ آپ۵ ربیع الاول ۱۳۱۳؁ ہجری میں محلہ احاطہ درگاہ حضرت سید شاہ موسیٰ قادریؒ موقوعہ اندرون پل قدیم حیدرآباد تولد ہوئے ۔ آپؒ کو والد بزرگوار سے سلسلہ عالیہ قادریہ میں بیعت و خلافت حاصل تھی ۔ آپ کی گفتگو میں الفاظ کم اور معنی زیادہ ہوتے تھے ۔ آپؒ پیدائشی ولی کامل اور صاحب دل بزرگ تھے ۔ آپؒ کا قید میانہ ، رنگ گندمی ،بال سیاہ و نرم ، جبین روشن و کشادہ اور کف دست ملائم تھے ۔ آپؒ ترکی ٹوپی ، کرتا ، قمیص ، تنگ موری کا سفید پاجامہ اور شیروانی زیب تن کرتے ۔حضرت کے مریدین و معتقدین کی تعداد ہزاروں ہیں ۔ حضرت نے اپنے حقیقی بھانجے اورچچازاد بھتیجے حضرت مولانا سید شاہ دستگیر علی قادری کو اپنا خلیفہ و جانشین منتخب فرمایا۔ حقیقت و معرفت کا یہ آفتاب ۲۴ ذیقعدہ ۱۳۹۳؁ہجری کو غروب ہوگیا ۔ نماز جنازہ مسجد چوک میں بعد نماز عشاء حضرت علامہ مولانا الحاج ابوالوفاء الافغانی ؒ نے پڑھائی ۔ احاطہ درگاہ حضرت قطب الاقطاب حضرت سید شاہ راجو محمد محمدالحسینی ؒ مصری گنج آپ کا مزار مبارک موجود ہے جو زیارت گاہِ خاص و عام ہے ۔

TOPPOPULARRECENT