Tuesday , August 22 2017
Home / شہر کی خبریں / محکمہ اقلیتی بہبود کو انگلش میڈیم مائناریٹی ریزیڈنشیل اسکولس کے قیام کی ذمہ داری

محکمہ اقلیتی بہبود کو انگلش میڈیم مائناریٹی ریزیڈنشیل اسکولس کے قیام کی ذمہ داری

30 اپریل تک عمارتوں کا انتخاب، 70 اسکولس کیلئے 350 کروڑ مختص
حیدرآباد۔/26مارچ، ( سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت نے جون سے شروع ہونے والے 70انگلش میڈیم اقامتی اسکولس کی عمارتوں کے انتخاب کی ذمہ داری اقلیتی بہبود کے عہدیداروں کو دی ہے۔ سکریٹری سید عمر جلیل نے اس سلسلہ میں احکامات جاری کئے جس کے مطابق اقلیتی اداروں کے اعلیٰ عہدیداروں کو دو، دو اضلاع کی ذمہ داری دی گئی تاکہ وہ 30اپریل تک اسکولوں کیلئے عمارتوں کا انتخاب مکمل کرلیں۔ منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن بی شفیع اللہ کو حیدرآباد اور رنگاریڈی کی ذمہ داری دی گئی ہے۔ پروفیسر ایس اے شکور سکریٹری ڈائرکٹر اردو اکیڈیمی کریم نگر اور ورنگل کے انچارج ہوں گے۔ چیف ایکزیکیٹو آفیسر وقف بورڈ محمد اسد اللہ کھمم اور نلگنڈہ میں عمارتوں کے انتخاب کو قطعیت دیں گے۔ منیجنگ ڈائرکٹر کرسچین فینانس کارپوریشن وکٹر کو نظام آباد اور عادل آباد کی ذمہ داری دی گئی ہے۔ وقف سروے کمشنر معصومہ بیگم محبوب نگر اور میدک میں عمارتوں کا انتخاب کریں گی۔ احکامات میں کہا گیا ہے کہ یہ عہدیدار ضلع نظم و نسق اور مقامی اقلیتی طبقہ سے بات چیت کرتے ہوئے عمارتوں کو قطعیت دیں گے۔ خانگی اور غیر مستعملہ سرکاری عمارتوں میں سے اسکول کی عمارت کا انتخاب کیا جائے گا۔ یہ عہدیدار نہ صرف عمارت کا انتخاب بلکہ اس کی تزئین نو اور دیگر ضروری اُمور کو قطعیت دیں گے۔ واضح رہے کہ حکومت نے جون سے اقلیتوں کیلئے 70اقامتی اسکولس کے آغاز کا فیصلہ کیا ہے جس کے لئے 350کروڑ روپئے مختص کئے گئے۔ پہلے سال یہ اسکولس کرایہ کی عمارتوں میں قائم کئے جائیں گے جبکہ اندرون ایک سال نئی عمارتوں کی تعمیر مکمل کرلی جائے گی۔ اسکولوں سے متعلق سوسائٹی کے صدرنشین ڈپٹی چیف منسٹر کڈیم سری ہری ہیں جبکہ ڈائرکٹر جنرل اینٹی کرپشن بیورو عبدالقیوم خاں سوسائٹی کے نائب صدرنشین ہیں۔

TOPPOPULARRECENT