Monday , October 23 2017
Home / شہر کی خبریں / محکمہ اقلیتی بہبود کی لنچ ڈپلومیسی عوام کے لیے مہنگی ثابت

محکمہ اقلیتی بہبود کی لنچ ڈپلومیسی عوام کے لیے مہنگی ثابت

ماتحت عہدیدار ذمہ داریوں سے غافل ، سینکڑوں عوام کو تلخ تجربہ کا سامنا
حیدرآباد ۔ 28۔ اکتوبر (سیاست نیوز) محکمہ اقلیتی بہبود کے عہدیداروں میں بہتر تال میل کیلئے شروع کی گئی لنچ ڈپلومیسی عوام کیلئے مہنگی ثابت ہوئی۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن کے مینجنگ ڈائرکٹر نے محکمہ کے اعلیٰ عہدیداروں کیلئے شہر کی ایک ہوٹل میں لنچ کا اہتمام کیا تھا، جس کے باعث اقلیتی بہبود کے دفاتر کئی گھنٹوں تک عہدیداروں سے خالی تھے اور عوام کو اپنے مسائل کے حل کے سلسلہ میں مایوسی کا سامنا کرنا پڑا۔ سکریٹریٹ ، ڈائرکٹریٹ اور حج ہاؤز میں موجودہ اداروں میں سہ پہر 4 بجے تک بھی اعلیٰ عہدیدار عوامی مسائل کی سماعت کیلئے دستیاب نہیں تھے۔ ان عہدیداروں کی واپسی 4 بجے کے بعد ہوئی، جب تک عوام کو انتظار کرنا پڑا اور کئی افراد انتظار کی زحمت برداشت کئے بغیر واپس ہوگئے۔ واضح رہے کہ اقلیتی بہبود کے عہدیداروں میں باہمی تال میل کو فروغ دینے کیلئے ہر ادارہ کی جانب سے وقفہ وقفہ سے لنچ کے اہتمام کا فیصلہ کیا گیا ۔ کیا ہی بہتر ہوتا ہے کہ لنچ کے بجائے عہدیدار آپس میں ڈنر کا اہتمام کرتے تاکہ دفتری اوقات کے بعد دعوت میں شریک ہوسکیں اور دفتری اوقات میں عوامی مسائل کی سماعت کیلئے دستیاب رہیں۔ اعلیٰ عہدیداروں کی عدم موجودگی کا فائدہ اٹھاکر ماتحت عہدیدار بھی اپنی ذمہ داریوں سے غافل نظر آئے۔ اس طرح محکمہ اقلیتی بہبود اور اقلیتی اداروں سے مسائل کی یکسوئی کیلئے رجوع ہونے والے سینکڑوں افراد کو تلخ تجربہ ہوا۔

TOPPOPULARRECENT