Friday , August 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / مدن پلی میں 20سال بعد حوصلہ افزاء بارش

مدن پلی میں 20سال بعد حوصلہ افزاء بارش

کسانوں میں مسرت کی لہر، دیوالی کی خوشیاں متاثر، نشیبی علاقے زیر آب

مدن پلی۔/11نومبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ضلع چتور میں گزشتہ تین دن سے ہورہی لگاتار بارش کی وجہ سے عام زندگی بری طرح متاثر ہوئی ہے۔Bay of Bengal میں آئے ہوئےRovan طوفان کی وجہ سے ٹاملناڈو ، آندھرا پردیش کے ساحلی علاقہ کرناٹک میں ہوئی بارش سے ٹماٹر، دھان، کپاس اور تور دال کی کاشت کو بھاری نقصان پہنچا ہے۔ ضلع چتور جو گزشتہ کئی سالوں سے قحط کے چنگل میں پھنسا تھا اس بارش کی وجہ سے زمین میں تری کی سطح میں اضافہ ہوا ہے۔ بالخصوص ضلع کے مشرقی علاقہ میں بارش نہ ہونے کی وجہ سے کسان اپنی زمین و جائیداد کو چھوڑ کر بڑے شہروں کی طرف رُخ کئے ہوئے ہیں اور اپنے گاؤں میں شاہی زندگی گذارنے والا کسان مزدوری کرنے پر مجبور ہوگیا۔ اس بارش کی وجہ سے ان کسانوں میں ایک نئی امید جاگ رہی ہے اور واپس اپنے مقام کو منتقل ہونے کی سوچ رہے ہیں۔ شہر مدن پلی میں 1996 میں ایسی بارش ہوئی تھی جس کی وجہ سے اطراف کے تالاب سیراب ہوچکے تھے۔ بدقستمی سے سات تالاب بیک وقت میں ٹوٹ کر اس کا پانی شہر میں آگیا جس کی وجہ سے جانی اور مالی نقصان ہوا تھا۔ 1996ء کے بعد سے شہر مدن پلی میں پیدا ہونے والے بچوں کو بارش، ندی، نالے کا علم بھی نہیں تھا۔ کبھی کبھار ایک دو گھنٹے کی بارش ہوتی تھی۔ مگر اس مرتبہ اتوار کی شام سے لے کر چہارشنبہ کی شام تک بغیر وقفہ کے لگاتار بارش ہورہی ہے جس کی وجہ سے پھر سے اطراف و اکناف کے تالاب میں پانی جمع ہوگیا ہے۔ تالابوں کے اطراف لوگ جمع ہوکر خوشی کا اظہار کررہے ہیں۔ ضلع انتظامیہ ضلع کلکٹر سدھارتھ جین، سب کلکٹر ملیکارجن اور ریونیو عملہ کی نگرانی میں24گھنٹے معائنے کئے جارہے ہیں۔ وقتاً فوقتاً تالابوں کا دورہ کرکے حالات سے آگاہ ہورہے ہیں۔ نچلی سطح میں رہائشی مکانات سے گھروں کو خالی کرکے محفوظ جگہوں پر منتقل کیا جارہا ہے۔ حالانکہ عام زندگی متاثر ہوئی ہے اور لوگ پریشان ہیں پھر بھی 19سال بعد ہورہی بارش سے مسرت کی لہر دیکھی جارہی ہے۔ دیوالی کی خوشیاں بھی کافی حد تک متاثر ہوئی ہیں، دیوالی کے پٹاخوں کی دکانات کو مشن کمپاؤنڈ کے میدان میں رکھا گیا ہے۔ شہر میں دوسری جگہ پر پٹاخوں کی فروخت پر گزشتہ کئی سالوں سے پابندی لگائی گئی ہے۔ میدان میں دکانات کے لئے جگہ دی گئی ہے مگر دکانات کے سامنے  کیچڑ سے لوگ پریشان ہیں۔ خریدار بھی بارش کی وجہ سے کم نظر آرہے ہیں۔ مدن پلی کے رکن اسمبلی ڈاکٹر تپا ریڈی بلدیہ چیرپرسن کے شیوا پرساد نے بھی بارش سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کرکے ریونیو عہدیداروں کو چوکنا رہنے کی ہدایت دی۔

TOPPOPULARRECENT