Friday , August 18 2017
Home / شہر کی خبریں / مرکزی حکومت سے دائرۃ المعارف کے لیے 37 کروڑ 71 لاکھ روپیوں کی منظوری

مرکزی حکومت سے دائرۃ المعارف کے لیے 37 کروڑ 71 لاکھ روپیوں کی منظوری

تاریخی کتابوں کا ترجمہ ، مخطوطات کا ڈیجیٹلائزیشن اور ری پرنٹنگ کا کام انجام دیا جائے گا
حیدرآباد۔17 فبروری (سیاست نیوز) مرکزی وزارت اقلیتی امور نے دائرۃ المعارف کی عظمت رفتہ کی بحالی کے سلسلہ میں منظورہ پراجیکٹ کی پیشرفت کا جائزہ لیا ہے۔ اس سلسلہ میں سکریٹری مرکزی وزارت اقلیتی امور نے نئی دہلی میں اجلاس طلب کیا تھا۔ تلنگانہ کے سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل اور ڈائرکٹر دائرۃ المعارف نے اجلاس میں شرکت کرتے ہوئے نئے پراجیکٹ کے تحت مکمل کیئے گئے کاموں کی تفصیلات سے واقف کروایا۔ واضح رہے کہ مرکز نے ہماری دھروور اسکیم کے تحت دائرۃ المعارف کے لیے 37 کروڑ 71 لاکھ روپئے کا پراجیکٹ منظور کیا ہے جس کے ذریعہ تاریخی کتابوں کا ترجمہ مخطوطات کے ڈیجیٹلائزیشن اور ری پرنٹنگ کا کام انجام دیا جائے گا۔ دائرۃ المعارف نے پراجیکٹ کے آغاز کے بعد سے اب تک 25 کتابوں کا ترجمہ کیا ہے اور دیگر کام بھی جاری ہے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود کے مطابق اقلیتی امور میں پراجیکٹ کی پیشرفت پر اطمینان کا اظہار کیا اور بعض تجاویز پیش کیں۔ اس پراجیکٹ میں ریاستی حکومت کی حصہ داری 3 کروڑ 5 لاکھ روپئے کی ہے۔ مرکز نے پہلی قسط کے طور پر 2 کروڑ 71 لاکھ روپئے جاری کئے جن میں سے ایک کروڑ 90 لاکھ خرچ کئے جاچکے ہیں۔ تلنگانہ حکومت کی رقم سے پرنٹنگ مشینری اور عمارت کی تزئین نو اور مرمت کا کام انجام دیا جائے گا۔ سید عمر جلیل نے بتایا کہ محکمہ اقلیتی بہبود کی راست نگرانی میں پراجیکٹ پر عمل آوری کی جارہی ہے اور تمام نادر مخطوطات اور کتابوں کو محفوظ کرنے کا عمل مقررہ مدت میں مکمل کرلیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس تاریخی ادارے میں موجود علمی اثاثہ حیدرآباد کی شناخت ہے اور تلنگانہ حکومت اس ادارے کے تحفظ کے لیے سنجیدہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ دائرۃ المعارف کی کارکردگی بہتر بنانے اور ملازمین کے مسائل کی یکسوئی کے سلسلہ میں بھی حکومت کے پاس تجویز زیر غور ہے۔ اس ادارے کو حکومت عصری ادارے میں تبدیل کرنا چاہتی ہے۔ ملک اور بیرون ملک سے ریسرچ اسکالر حیدرآباد کا رخ کرتے ہوئے اس ادارے سے استفادہ کررہے ہیں۔ مرکزی وزیر اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے دائرۃ المعارف کی ترقی کے سلسلہ میں دلچسپی کا اظہار کیا اور پراجیکٹ کی عاجلانہ تکمیل کی امید ظاہر کی۔

TOPPOPULARRECENT