Sunday , August 20 2017
Home / شہر کی خبریں / مرکز سے تلنگانہ کی ترقی کیلئے حصول فنڈس کی مساعی چیف منسٹر کی دورہ چین سے قبل وزیر اعظم مودی سے ملاقات

مرکز سے تلنگانہ کی ترقی کیلئے حصول فنڈس کی مساعی چیف منسٹر کی دورہ چین سے قبل وزیر اعظم مودی سے ملاقات

حیدرآباد ۔ 26 ۔ اگست (سیاست  نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ آئندہ ماہ اپنے مجوزہ دورہ چین سے قبل وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقات کرتے ہوئے تلنگانہ کیلئے خصوصی پیاکیج کے اعلان کی نمائندگی کریں گے۔ چیف منسٹر ورلڈ اکنامک فورم کے اجلاس میں شرکت کیلئے 8 اور 15 ستمبر چین کے دورہ پر روانہ ہورہے ہیں۔ آندھرپردیش کی جانب سے خصوصی موقف کے حصول کے سلسلہ میں جاری سرگرمیوں کو دیکھتے ہوئے تلنگانہ حکومت نے بھی ترقیاتی پیاکیج کے حصول کا فیصلہ کیا ہے۔ چیف منسٹر نے مرکزی حکومت سے کی جانے والی نمائندگی کے سلسلہ میں یادداشت کی تیاری کی ذمہ داری پارٹی کے سکریٹری جنرل ڈاکٹر کیشو راؤ کو دی ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ کیشو راؤ اعلیٰ عہدیداروں اور حکومت کے مشیروں کے ساتھ تلنگانہ کیلئے درکار مرکزی فنڈس پر مشتمل رپورٹ کی تیاری میں مصروف ہیں۔ آندھراپردیش تنظیم جدید بل میں تلنگانہ ریاست کے ساتھ جو وعدے کئے گئے تھے، ان کا حوالہ دیتے ہوئے مرکز سے بہار کی طرز پر خصوصی پیاکیج کے اعلان کا مطالبہ کیا جائے گا۔ چیف منسٹر دہلی میں اعلیٰ سطحی وفد کے ساتھ وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقات کا منصوبہ رکھتے ہیں اور وزیراعظم کے دفتر سے ملاقات کا وقت مقرر کرنے کی خواہش کی گئی ہے۔ وزراء اور ارکان پارلیمنٹ اس وفد میں شامل رہیں گے۔ واضح رہے کہ چیف منسٹر آندھراپردیش چندرا بابو نائیڈو  نے ان کی ریاست کیلئے خصوصی موقف یا پھر خصوصی پیاکیج کا مطالبہ کرتے ہوئے مرکزی حکومت پر دباؤ میں اضافہ کردیا ہے۔ چندرا بابو نائیڈو کی ان سرگرمیوں اور مرکزی حکومت کے مثبت رویہ کو دیکھتے ہوئے تلنگانہ حکومت نے بھی خصوصی پیاکیج کا مطالبہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ تلنگانہ کے آبپاشی  پراجکٹس اور دیگر اسکیمات کے سلسلہ میں بہار کی طرز پر فنڈس کی اجرائی کا مطالبہ کیا جائے گا۔ ذرائع نے بتایا کہ مرکز سے خصوصی فنڈس کے حصول کیلئے ٹی آر ایس نے تلنگانہ ، بی جے پی قائدین کی تائید حاصل کرنے کی کوششوں کا آغاز کیا ہے۔ تلنگانہ کے سینئر بی جے پی قائدین سے ربط پیدا کرتے ہوئے مرکز میں شامل وزراء اور وزیراعظم سے علحدہ نمائندگی کی خواہش کی جارہی ہے۔ ٹی آر ایس قائدین کو امید ہے کہ خصوصی پیاکیج کی مہم میں اسے تلنگانہ بی جے پی قائدین کی تائید حاصل ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT