Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / مسافرین کی چوکسی سے ایک بڑا ٹرین حادثہ ٹل گیا

مسافرین کی چوکسی سے ایک بڑا ٹرین حادثہ ٹل گیا

آگرہ 20 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) اتکل ٹرین حادثہ کے آج دوسرے ہی دن ایک اور بڑا ٹرین حادثہ ٹال دیا گیا جبکہ کانپور ۔ نئی دہلی روٹ پر مسافرین نے چوکسی برتتے ہوئے ٹنڈلہ ۔ دہلی کے موٹر کوچ سے دھواں اٹھتا ہوا دیکھا اور حکام کو مطلع کرتے ہوئے ٹرین کو چامرولہ اسٹیشن پر روکدیا گیا ۔ کہا گیا ہے کہ ٹرین کے ایک پہئیہ میں خرابی پیدا ہوگئی تھی اور وہ گھوم نہیں رہا تھا بلکہ گھس رہا تھا اور اس سے گھسنے کی بلند آواز آنے لگی تھی ۔ اس کے بعد ٹرین کے موٹر کوچ سے دھواں بھی اٹھتا ہوا دکھائی دیا جس کے فوری بعد ریلوے حکام کو مطلع کیا گیا اور ٹرین کو روک دیا گیا ۔ کہا گیا ہے کہ یہ واقعہ آج صبح 7.35 بجے چامرولہ اسٹیشن پر پیش آیا جو دہلی سے 180 کیلومیٹر کے فاصلہ پر واقع ہے ۔ کہا گیا ہے کہ محکمہ پوسٹ کا ایک ملازم سریندر اس ٹرین میں سفر کر رہا تھا ۔ اس نے بتایا کہ ٹرین کے پہئیہ سے گھسنے کی بھاری آواز آ رہی تھی جب ٹرین ٹنڈلہ جنکشن سے شروع ہوئی ۔ اس آواز پر مسافرین میںہیبت پیدا ہوگئی تھی اور پھر موٹر کوچ سے دھواں اٹھتا ہوا دکھائی دیا ۔ مسافرین نے فوری ریلوے اسٹاف کو مطلع کیا اور جیسے ہی ٹرین چامرولہ اسٹیشن پہونچی وہاںاسے روک دیا گیا اور مسافرین ٹرین سے اتر گئے ۔ مسافرین نے بتایا کہ انہیں ٹرین روکنے کے پانچ گھنٹوں بعد تک وہیں رکنا پڑا کیونکہ حکام کی جانب سے کوئی متبادل انتظامات مسافرین کو روانہ کرنے کیلئے نہیں کئے گئے تھے ۔ ریلوے عہدیداروں کے بموجب وہ ایک بڑی تکنیکی خرابی تھی جس کے نتیجہ میں حادثہ بھی ہوسکتا تھا کیونکہ برہن جنکشن اور چامرولہ کے درمیان اس ٹرین کی رفتار 50 کیلومیٹر فی گھنٹہ تھی ۔ ڈویژنل ٹریفک مینیجر ٹنڈلہ جنکشن شیوم شرما نے بتایا کہ سب سے پہلے ہمارے گیٹ مین نے ٹرین سے دھواں نکلتا ہوا دیکھا جس کے بعد ٹرین کو چامرولہ پر روک دیا گیا ۔ تحقیقات کے دوران یہ پتہ چلا کہ ٹرین کا ایک پہئیہ جام ہوگیا تھا اور تین موٹر کوچ میں سے ایک کا برقی کا وائر بھی متاثر ہوگیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT