Thursday , August 24 2017
Home / Top Stories / مستقبل بی جے پی کا ہے ‘ کانگریس رو بہ زوال : نتن گڈکری

مستقبل بی جے پی کا ہے ‘ کانگریس رو بہ زوال : نتن گڈکری

اپوزیشن جماعت علاقائی جماعتوں سے سمجھوتے کرنے پر مجبور ۔ بی جے پی قومی عاملہ اجلاس کے بعد مرکزی وزیر کی پریس کانفرنس

الہ آباد 13 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) یہ واضح کرتے ہوئے کہ مستقبل بی جے پی کا ہے پارٹی نے آج کہا کہ اس کے امکانات میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور ملک کے شمالی اور جنوبی حصوں میں بھی اس کو خاطر خواہ کامیابیاں مل رہی ہیں جبکہ ماضی میں یہاں اسے عوامی تائید حاصل نہیں تھی ۔ پارٹی نے کہا کہ کانگریس پارٹی اب رو بہ زوال ہے اور وہ اپنی بقا کیلئے علاقائی جماعتوں کے ساتھ سمجھوتے کرنے پر مجبور ہوگئی ہے ۔ راجیہ سبھا انتخابات کے دوران کانگریس نے ہریانہ میں انڈین نیشنل لوک دل سے اور کچھ ریاستوں میں بی ایس پی سے مفاہمت کی تھی ۔ مرکزی وزیر نتن گڈکری نے کاہ کہ ایک جانب بی جے پی اور نریندر مودی کا گراف بڑھتا جا رہا ہے تو دوسری جانب اصل اپوزیشن جماعت کی مقبولیت گھٹتی جا رہی ہے ۔ اپوزیشن جماعت علاقائی جماعتوں سے سمجھوتے کرتے ہوئے اپنی پالیسیوں کا فیصلہ کر رہی ہے ۔ پارٹی کی دو روزہ قومی عاملہ کے اجلاس میں ایک سیاسی قرار داد کی منظوری کے بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے نتن گڈکری نے اتر پردیش میں کانگریس کی افادیت پر بھی سوال اٹھایا اور آسام میں بی جے پی کی کامیابی کو پیش کرنے کی کوشش کی ۔ انہوں نے ادعا کیا کہ کیرالا اور مغربی بنگال میں بی جے پی کے ووٹوں کے تناسب میں اضافہ ہوا ہے اور وہ بڑھتی جا رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آنے والا وقت وزیر اعظم مودی کی قیادت اور ہماری پارٹی اور نظریات کی کامیابی سے منسوب ہوگا ۔ بی جے پی جنوب اور مشرقی ہندوستان میں بھی ایک مستحکم طاقت بن کر ابھریگی ۔انہوں نے کہا کہ مستقبل میں مودی کی قیادت میں ملک کا مستقبل اور حالات بدل جائیں گے ۔ گڈکری نے کانگریس کی جانب سے غلام نبی آزاد کو یو پی امور کی ذمہ داری سونپے جانے کے تعلق سے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ جو لوگ یو پی کی سیاست جانتے ہیں وہ یہاں کانگریس کی افادیت سے بھی واقف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایسی کسی جماعت کو زیادہ اہمیت دینے کی ضرورت کیا ہے جس کی کوئی خاص اہمیت نہیں رہ گئی ہے ۔ ہم سب جانتے ہیں کہ کانگریس کا یہاں موقف کیا رہ گیا ہے ۔ گڈکری نے یو پی میں بی جے پی وزارت اعلی امیدوار کے تعلق سے سوال پر کہا کہ اس تعلق سے کوئی بھی فیصلہ کرنا پارٹی صدر کا اختیار تمیزی ہے اور جب کبھی ایسا کوئی فیصلہ کیا جائیگا اس کا اعلان بھی کردیا جائیگا ۔ گڈکری نے ادعا کیا کہ دو سال میں مودی حکومت نے اچھے کام کئے ہیں اور ان کاموں کے نتائج بھی سامنے آنے شروع ہوگئے ہیں۔ حکومت چاہتی ہے کہ غریب ‘ ورکرس ‘ گاوں والے اور صنعتیں سب کی ترقی ہو اور اس کیلئے اقدامات کئے جا رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT