Sunday , August 20 2017
Home / Top Stories / مسجد اقصیٰ میں میٹل ڈیٹکٹرس کی تنصیب کیخلاف احتجاج جاری

مسجد اقصیٰ میں میٹل ڈیٹکٹرس کی تنصیب کیخلاف احتجاج جاری

یروشلم 18 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) مسلمانوں کی جانب سے مسجد اقصیٰ میں اسرائیلی عہدیداروں کے میٹل ڈیٹکٹرس اور باب الداخلہ پر کیمروں کی تنصیب کے خلاف مسلمانوں کا احتجاج آج مسلسل تیسرے دن بھی جاری رہا۔ مصلیوں نے حرم شریف کے احاطہ کے باہر نماز ادا کی۔ قبل ازیں مسجد اقصیٰ پر حملے کے بعد اسرائیلی ۔ فلسطینی کشیدگی میں اضافہ ہوگیا جبکہ اسرائیلی عہدیداروں نے تازہ صیانتی اقدامات کرتے ہوئے مسجد اقصیٰ کے باب الداخلہ پر میٹل ڈیٹکٹرس اور کیمرے نصب کئے۔ مصلیوں کو حکم دیا گیا کہ میٹل ڈیٹکٹرس اور کیمروں کے سامنے سے گزرتے ہوئے مسجد میں داخل ہوں۔ ایک 17 سالہ فلسطینی جو سلوان کے علاقے میں شدید زخمی ہوا تھا، سرکاری فلسطینی خبررساں ادارہ وفا کے بموجب اُسے گولی مار کر ہلاک کردیا گیا۔ وہ فلسطینی ہسپتال مقاصد میں زیرعلاج تھا۔ اسرائیلی پولیس کے بموجب اِس سلسلے میں 6 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ مسلم مصلیوں نے مسجد اقصیٰ کے احاطے میں اُس وقت تک داخل ہونے سے انکار کردیا جب تک کہ میٹل ڈیٹکٹرس اور کیمرے ہٹائے نہیں جاتے۔ دریں اثناء تین عرب نژاد اسرائیلیوں نے پولیس پر فائرنگ کرکے فرار ہوتے ہوئے مسجد اقصیٰ کے احاطہ میں پناہ لے لی تھی جنھیں اسرائیلی فوج نے گولی مار کر ہلاک کردیا۔ یہودیوں کو مسجد اقصیٰ کے دورے کی اجازت ہے تاہم اُنھیں یہاں عبادت کی اجازت نہیں۔

TOPPOPULARRECENT