Tuesday , September 19 2017
Home / شہر کی خبریں / مسلمانوں کا اتحاد وقت کی اہم ضرورت ‘ نفاق سے بچنا ضروری

مسلمانوں کا اتحاد وقت کی اہم ضرورت ‘ نفاق سے بچنا ضروری

سیرت نبوی ؐ اور عصر حاضر سہ روزہ بین الاقوامی سمینار ۔ جناب محمود علی ‘ مولانا سعود عالم قاسمی ‘ مولانا ولی رحمانی و دوسروں کا خطاب
حیدرآباد /21 فبروری (سیاست نیوز) شریعت نبویؐ کو ترک کرنے سے آج دنیا بھر میں مسلمان ذلت و رسوائی کی زندگی گزاررہے ہیں ۔ مسلمانوں میں آپسی اتحاد و اتفاق وقت کی اہم ضرورت ہے کیونکہ مسلم دشمن طاقتیں مسلمانوں میں مسلک کے نام پر اختلافات پیدا کرکے انہیں منقسم کرنے کی سازش کررہی ہیں ۔ مسلمانوں کو تعلیم کے حصول کے ذریعہ ترقی کا سفر طئے کرنا چاہئے چونکہ تعلیم ہی واحد ایسا راستہ ہے جسکے ذریعہ مسلمان اپنی کامیابی کو یقینی بناسکتے ہیں ۔ شریعت محمدیؐ کو دیگر ابنائے وطن تک پہونچانے یہ ضروری ہے کہ ہم انکے ہمراہ انسانیت کا سلوک کرکے انہیں دینی تعلیمات سے واقف کروائیں ۔ المعہد العالی الاسلامی کے زیراہتمام سہ روزہ بین الاقوامی سیمینار بعنوان سیرت نبویؐ اور عصرِ حاضر کا آج افتتاحی اجلاس تعلیم آباد میں منعقد ہوا جہاں معروف علماء و سیاسی قائدین نے ان خیالات کا اظہار کیا ۔ مولانا سعید الرحمن اعظمی کی زیر صدارت اجلاس سے خطاب کے دوران مولانا سعود عالم قاسمی نے شمالی ہند میں قبر سے میت نکالے جانے کے واقعہ کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ واقعہ مسلکی اختلافات کی بدترین مثال ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ اس واقعہ پر جو تبصرے ہوئے ہیں وہ انتہائی افسوسناک ہیں ۔ ایک غیر مسلم نے اس واقعہ پر تبصرہ کرتے ہوئے یہاں تک کہہ دیا کہ اچھا ہے کہ وہ ہندو ہے کیونکہ شمشان میں ہر کسی کی چتا جلانے کی اجازت ہے ۔ ایسے تبصرے امت واحدہ کیلئے کربناک ہیں جبکہ مسلکی اختلافات کی یہ صورت انتہائی افسوسناک حد تک پہونچ چکی ہے ۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ علماء و حفاظ اکرام کو عصری تعلیم حاصل کرکے امت کی ترقی میں کردار ادا کرنا چاہئیے ۔ انہوں نے بتایا کہ مسلمان عظمت نبویؐ کیلئے اپنے سر کٹا سکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ عرب ممالک کو اللہ تعالیٰ نے دولت سے مالا مال کیا لیکن عرب ممالک میں یہ دولت تعلیم کی بجائے جنگ و جدل پر ضائع کی جارہی ہے ۔ جناب محمد محمود علی نے کہا کہ جس قوم کو خیر امت بناکر بھیجا گیا ہے وہ ایک دوسرے کے خاتمے کیلئے کوشاں ہے ۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے تعلیم کے ذریعہ غربت و افلاس کو دور کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ غربت و افلاس کے خاتمے کے ذریعہ دعوت دین و تبلیغ پر بھی صحیح توجہ مرکوز کی جاسکتی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ جب تک عمل کے ذریعہ ہم تعلیمات نبوی صلی اللہ علیہ وسلم کی تبلیغ نہیں کرتے کامیابی دشوار ہے ۔ مولانا سید ولی رحمانی نے امت مسلمہ کو بدر و حنین کے واقعات یاد رکھنے کی تلقین کرتے ہوئے کہا کہ ان واقعات کے ساتھ ہمیں صلح حدیبیہ کی بھی تاریخ یاد رکھنی چاہئیے ۔ امت مسلمہ عفو و درگذر کے معمول کو فراموش کررہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں صبر و تحمل اعلیٰ اخلاق ، بلند کردار کے علاوہ اخلاق کریمہ اختیار کرنے کی ضرورت پڑرہی ہے جبکہ یہ تعلیمات خود ہمارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے دنیا تک پہونچائی ہیں ۔ مولانا محمود مدنی نے کہا کہ آج مسلمانوں کو اس ملک میں لاکھ مشکلات کے باوجود حالات بہتر ہیں اور جو بگاڑ پیدا ہورہا ہے اس سے منظم انداز میں نمٹنے کی ضرورت ہے ۔         ( باقی سلسلہ صفحہ 6 پر )

TOPPOPULARRECENT