Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / مسلمانوں کو دھوکہ دینے سدھیر کمیشن کا قیام

مسلمانوں کو دھوکہ دینے سدھیر کمیشن کا قیام

رکن اسمبلی جگتیال ٹی جیون ریڈی کا چیف منسٹر پر الزام
جگتیال ۔ 2 نومبر۔ ( سیاست نیوز ) ورنگل پارلیمانی ضمنی انتخابات کے سی آر کی ہٹ دھرمی کا نتیجہ ہے ۔ عام انتخابات میں منشور میں کئے گئے وعدے فراموش کرنے کے باوجود یہ کہنا کہ 99.9 فیصد وعدے پورے کئے گئے جھوٹ کا پلندہ ہے ان خیالات کا اظہار رکن اسمبلی جگتیال اور کانگریس ڈپٹی فلور لیڈر مسٹر ٹی جیون ریڈی نے کل شام اپنی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کو مخاطب کرتے ہوئے کیا ۔ انھوں نے کہا کہ عام انتخابات سے قبل مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات دینے کا وعدہ کیا آج تقریباً دو سال کا عرصہ گذرنے آرہا ہے ۔ مسلمانوں کے تحفظات پر کسی قسم کی عمل آوری نہ کئی گئی ۔ انھوں نے کہاکہ 12 فیصد تحفظات بی سی کمیشن کے ذریعہ ہی ممکن ہے ، صرف مسلمانوں کو دھوکہ دینے کیلئے سدھیر کمیشن کا قیام عمل میں لایا گیاہے۔ انھوں نے کہا کہ اگر چیف منسٹر کو مسلمانوں سے حقیقی ہمدردی ہوتی تو مسلم تحفظات کیلئے بی سی کمیشن کے ذریعہ سروے کروایا جاتا ، آج مسلمان تعلیمی اور معاشی پسماندگی کاشکار ہیں ۔ یہی نہیں گریجن تحفظات کا مسئلہ بھی ایسا ہی ہے جبکہ گریجن تلنگانہ ریاست میں 10% فیصد ہیں ، کے سی آر نے انتخابات میں 12 فیصد تحفظات دینے کا وعدہ کیا ۔ گریجن تحفظات میں دیگر طبقات کو شامل کرنے کی کوشش کررہے ہیں جوکہ ریاست کو اس کے اختیارات نہیں ہے ۔

TOPPOPULARRECENT