Saturday , September 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / مسلمانوں کی فلاح و بہبودی کو اولین ترجیح

مسلمانوں کی فلاح و بہبودی کو اولین ترجیح

حسن آباد کو مثالی حلقہ بنانے کا عزم
رکن اسمبلی ستیش بابو کا ’سیاست نیوز‘ کو انٹرویو
حسن آباد۔/18ڈسمبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) میری انتخابی کامیابی میں مسلمان ووٹرس کا کردار ناقابل فراموش ہے۔ مسلمانوں کی تائید کے بغیر میری کامیابی ناممکن تھی، میں اپنی ماباقی میعاد کے دوران حسن آباد حلقہ کے مسلمانوں کی ہمہ جہتی ترقی کیلئے ٹھوس اقدامات کرنے کو اولین ترجیح دوں گا۔ مقامی عوام بالخصوص مسلم طبقہ کے مسائل سے میں کما حقہ واقف ہوں۔ ان خیالات کا اظہار تلنگانہ راشٹرا سمیتی سے وابستہ رکن اسمبلی حسن آباد مسٹر وی ستیش بابو نے یہاں اپنے دفتر میں نمائندہ سیاست معین اطہر عثمانی کو تفصیلی انٹرویو دیتے ہوئے کیا۔انہوں نے اپنے اس دیرینہ عزم کا اعادہ کیا کہ وہ حلقہ اسمبلی حسن آباد میں بڑے پیمانے پر ترقیاتی کام انجام دے کر مثالی حلقہ و ریاست تلنگانہ بھر میں اول مقام پر کھڑا کریں گے۔ اس ضمن میں انہیں اپنے والد محترم و رکن راجیہ سبھا مسٹر کیپٹن وی لکشمی کانت راؤ، ضلع سدی پیٹ کے وزیر ٹی ہریش راؤ کے علاوہ وزیر اعلیٰ کے سی آر کا بھرپور تعاون و سرپرستی حاصل ہے۔ ماضی کا ذکر کرتے ہوئے رکن اسمبلی حسن آباد مسٹر وی ستیش بابو نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ سابق اراکین اسمبلی نے حلقہ کی ترقی کیلئے کوئی سنجیدہ کوشش نہیں کی تھی جس کے باعث حلقہ حسن آباد کوئی بڑے قابل ذکر ترقیاتی کام انجام نہیں دیئے گئے اور حلقہ خودبخود پسماندگی کا شکار ہوگیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ وہ اپنے انتخاب کے فوری بعد سے حلقہ حسن آباد کی ترقی کو لیکر متعلقہ وزراء و چیف منسٹر کے سی آر سے مسلسل ربط میں ہیں اور ہمیشہ کسی نہ کسی کام کیلئے نمائندگی کررہے ہیں۔ مسلمانوں کی فلاح و بہبود کے تاحال کئے گئے اقدامات سے متعلق استفسار پر رکن اسمبلی مسٹر وی ستیش بابو نے بتایا کہ حلقہ میںلئے  تاحال 45 مساجد کی مرمت و آہک پاشی کی گئی۔18مواضعات میں قبرستانوں کی حصار بندی کے لئے رقومات جاری کی گئیں۔ تقریباً 200 نو بیاہتا دلہنوں کو شادی مبارک اسکیم سے فی کس 51 ہزار روپئے منظور کئے گئے۔ مزید اقدامات جاری ہیں۔ مسٹر وی ستائش بابو رکن اسمبلی حسن آباد نے اس موقع پر یاد دلایا کہ گزشتہ سال اسمبلی کے پہلے بجٹ اجلاس میں بذات خود انہوں نے اسمبلی میں ریاست تلنگانہ کے مسلمانوں کیلئے 12فیصد تحفظات فراہم کرنے کا سب سے پہلے مطالبہ کیا تھا جس کی تمام برسراقتدار جماعت کے ارکان نے پرزور تائید کی تھی اور ریاستی وزیر اعلیٰ کے چندر شیکھر راؤ نے کافی سراہنا کی تھی۔ مسٹر وی ستیش بابو رکن اسمبلی حسن آباد نے مقامی نمائندہ سیاست سے مسلمانوں کے بشمول تمام طبقات کے مسائل کو اخبار سیاست کے ذریعہ عیاں کرنے اور ان کی یکسوئی کیلئے کسی بھی وقت نمائندگی کرنے کی خواہش کی۔ انٹرویو کے دوران ٹی آر ایس قائدین محمد ساجد، ابراہیم، پلا راجو، رویندر ریڈی اور دیگر موجودتھے۔

TOPPOPULARRECENT