Thursday , June 29 2017
Home / ہندوستان / مسلمانوں کے مذہبی معاملات میں مداخلت نہ کی جائے

مسلمانوں کے مذہبی معاملات میں مداخلت نہ کی جائے

تباہ کن نتائج برآمد ہوں گے ، نریندر مودی کو انتباہ
کولکتہ ۔ /20 نومبر(سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی پر مسلمانوں کے مذہبی حقوق میں مداخلت کی کوشش کا الزام عائد کرتے ہوئے وزیر تعلیم مغربی بنگال صدیق اللہ چودھری نے کہا کہ ریاستی حکومت یکساں سیول کوڈ کی مخالف ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ چند دن قبل چیف منسٹر ممتابنرجی کی رہائش گاہ پر پارٹی اجلاس منعقد ہوا جس میں چیف منسٹر نے بتایا کہ انہیں مرکزی حکومت سے مکتوب موصول ہوا ہے جس میں یکساں سیول کوڈ پر ریاستی حکومت کی رائے طلب کی گئی ۔ ممتا بنرجی نے فوری جواب دیا کہ ریاستی حکومت یکساں سیول کوڈ کبھی نافذ نہیں کرے گی ۔ صدیق اللہ چودھری نے آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈکی ریالی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اگر نریندر مودی مسلمانوں کے مذہبی حقوق سے کھلواڑ کی کوشش کریں تو اس کے تباہ کن نتائج برآمد ہوں گے ۔ بی جے پی کو یہ نہیں بھولنا چاہئیے کہ مسلمانوں کے سرگرم رول کی وجہ سے ہندوستان آزاد ہوا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT