Tuesday , October 17 2017
Home / شہر کی خبریں / مسلم تحفظات بل کے خلاف بی جے پی کا ریاست گیر احتجاجی پروگرام

مسلم تحفظات بل کے خلاف بی جے پی کا ریاست گیر احتجاجی پروگرام

مرکزی حکومت مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات کی اجازت نہیں دے گی ، ڈاکٹر لکشمن
حیدرآباد ۔ 17 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز ) : بی جے پی تلنگانہ اسٹیٹ یونٹ صدر ڈاکٹر لکشمن نے مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات کی فراہمی کے لیے ٹی آر ایس حکومت کی جانب سے منظور کردہ بل کے خلاف ریاست بھر میں احتجاجی پروگرام شروع کرنے کا اعلان کیا اور کہا کہ یہ مذہب کی بنیاد پر ہے ۔ آج یہاں ایک پریس کانفرنس سے مخاطب کرتے ہوئے ڈاکٹر لکشمن نے کہا کہ یہ بل بی سیز کے خلاف ہوگا اور کہا کہ مرکزی حکومت ریاستی حکومت کو مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کی اجازت نہیں دے گی ۔ جیسا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی تجویز ہے ۔ ڈاکٹر لکشمن نے کہا کہ کمزور طبقات کے حقوق کو دباتے ہوئے کسی کو بھی مذہب کی بنیادپر تحفظات دینے کے ریاستی حکومت کے فیصلہ کے خلاف بی جے پی ریاست بھر میں بڑے پیمانہ پر تحریک چلائے گی جو تلنگانہ مومنٹ کے خطوط پر ہوگی ۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کسی کو ان کے مذہب کی بنیاد پر تحفظات فراہم کرنے کی اجازت نہیں دے گی ۔ انہوں نے پارٹی قائدین پر زور دیا کہ وہ مسلم تحفظات کے خلاف گاؤں سے ریاست کی سطح پر تلنگانہ تحریک کے خطوط پر ایک تحریک چلائیں ۔ جبکہ گاؤں ، منڈل اور اسمبلی حلقہ کی سطح پر اس سلسلہ میں جلسے ، دھرنا پروگرامس اور راستہ روکو پروگرامس منعقد کئے جانے چاہئے ۔ ڈاکٹر لکشمن نے کہا کہ ڈاکٹر بی آر امبیڈکر نے کہا تھا کہ مذہب کی بنیاد پر تحفظات ملک کے لیے صحت مند نہیں ہیں ۔ اس لیے انہوں نے صرف پسماندہ طبقات کو تحفظات میں شامل کیا تھا لیکن سیاسی جماعتیں ان کی ووٹ بینک سیاست کے لیے مذہبی اساس پر تحفظات فراہم کرنے کی کوشش کررہی ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT