Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / مسلم تحفظات کیلئے بی سی کمیشن سے نمائندگی پر زور

مسلم تحفظات کیلئے بی سی کمیشن سے نمائندگی پر زور

تحفظات پر جنگ آخری مرحلہ میں داخل ، وحید احمد کی عوام سے اپیل
حیدرآباد ۔ 16 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : ٹی آر ایس کے اسٹیٹ سکریٹری وحید احمد ایڈوکیٹ نے رضاکارانہ تنظیموں ، مسلم عوامی منتخب نمائندوں اور علمائے کرام سے اپیل کی کہ وہ بی سی کمیشن سے رجوع ہو کر 12 فیصد مسلم تحفظات کے لیے نمائندگی کریں ۔ مسلم تحفظات کی جنگ آخری مرحلے میں پہونچ چکی ہے ۔ ’ اگر اب نہیں تو پھر کبھی نہیں ‘ کے نعرے اور جذبے کے ساتھ تمام مسلمانوں کو جماعتی وابستگی سے بالاتر ہو کر مسلمانوں کو تعلیم اور ملازمتوں میں 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کے لیے اپنی ذمہ داری بھی نبھانی چاہئے ۔ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر مسلمانوں کو تحفظات فراہم کرنے کے معاملے میں عہد کے پابند ہے ۔ مسلمانوں کی تعلیمی معاشی سماجی پسماندگی کا جائزہ لینے کے لیے پہلے سدھیر کمیشن تشکیل دی گئی ۔ رپورٹ وصول ہوتے ہی بی سی کمیشن تشکیل دیا گیا ہے ۔ بی سی کمیشن نے 14 تا 17 دسمبر تک مسلمانوں کو تحفظات فراہم کرنے کی نمائندگیاں قبول کرنے کے لیے سماعت کا اہتمام کیا ہے جس کے تین دن مکمل ہوچکے ہیں ۔ توقع کے مطابق مسلمانوں کا ردعمل وصول نہیں ہوا ہے ۔ لہذا آج آخری دن ہے مسلمان اپنی ذمہ داری نبھائیں ساتھ ہی حیدرآباد کے مسلم منتخب نمائندے بھی مسلمانوں کی پسماندگی کو بی سی کمیشن سے رجوع کرتے ہوئے مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کی نمائندگی کریں ۔ ٹی آر ایس کی جانب سے بھی شہر و اضلاع سے بڑے پیمانے پر نمائندگیاں کی جارہی ہیں ۔ وحید احمد ایڈوکیٹ نے کہا کہ مخالف مسلم تحفظات دشمن طاقتیں بھی بی سی کمیشن سے رجوع ہو کر مسلمانوں کو تحفظات فراہم کرنے کی محالفت کررہی ہیں ۔ ان کی تمام تدابیر کو الٹا کرنے کے لیے مسلمانوں کو سرگرم ہونا ضروری ہے ۔ وقت نکل جانے کے بعد افسوس کرنا بے سود ہوگا ۔۔

TOPPOPULARRECENT