Monday , August 21 2017
Home / ہندوستان / مسلم طالبات کیلئے سرکاری اقامتی کالجوں کا قیام

مسلم طالبات کیلئے سرکاری اقامتی کالجوں کا قیام

شرح خواندگی میں حوصلہ افزاء اضافہ، مرکزی وزیر کا بیان
نئی دہلی ۔ 16 ۔ مارچ (سیاست ڈاٹ کام) حکومت نے مسلم طبقہ کی خواتین میں شرح خواندگی کے اضافہ کیلئے 15 ڈگری کالجس اور 592 ہاسٹل کالجوں کے قیام کی اجازت دیدی ہے ۔ مملکتی وزیر اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے آج لوک سبھا میں ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ اترپردیش اور بہار میں 11 ماڈرن مسلم کالجس قائم کئے جائے۔ علاوہ ازیں حکومت نے ڈگری کالجوں کو اپ گریڈ کرنے کا منصوبہ بنایا ہے جس میں بالترتیب اروناچل پردیش ، آسام ، کرناٹک ، کیرالا میںایک ایک شامل ہیں۔ وزیر موصوف سے یہ سوال کیا گیا تھا کہ مسلم فرقہ کے مرد و خواتین میں خواتین کی شرح کیا ہے ؟ اور فروغ تعلیم کیلئے حکومت نے کیا اقدامات کئے ہیں ؟ انہوں نے بتایا کہ بارہویں منصوبہ کے دوران ہمہ شعبہ جاتی ترقیاتی پروگرام کے تحت وزارت اقلیتی امور نے 15 ڈگری کالج اور 592 ہاسٹلوں (77 ہاسٹلس کی تکمیل) بشمول اقلیتی آبادی کے علاقوں میں گرلز ہاسٹلوں کے قیام کی تجویز کو منظوری دیدی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ 2011 کی مردم شماری کے مطابق مسلمانوں میں خواندگی کی شرح 68.5 فیصد ہے جوکہ 2001 ء میں 59.1 فیصد تھی ۔ 2011 کے سروے رپورٹ کے مطابق شرح خواندگی مردوں میں 74.7 فیصد اور خواتین میں 62 فیصد ہے۔

TOPPOPULARRECENT