Wednesday , August 23 2017
Home / دنیا / مشتبہ دہشت گردوں کی برطانوی مقامی مسلمانوںکی جاسوسی

مشتبہ دہشت گردوں کی برطانوی مقامی مسلمانوںکی جاسوسی

لندن۔20ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) برطانیہ کے محکمہ سراغ رسانی ایم۔15نے ایک متنازعہ اقدام کرتے ہوئے ان مسلمان مخبروں کو ملک گیر سطح پر مختصر مدتی سراغ رسانی مہمات کیلئے استعمال کرتے ہوئے انہیں ادائیگی کرنا شروع کردی ہے ۔ یہ مسلمان دہشت گردحملوں کے سلسلہ میں جاسوسی کرتے ہیں اور برطانوی اسلام پسند انتہا پسندوں سے تعلقات قائم کرتے ہیں ۔ محکمہ سراغ رسانی نے عارضی ملازمت فراہم کرتے ہوئے انہیں جاسوسی کی مہمات پر روانہ کررہا ہے اور ان کے احداد کا بھی تعین کررہا ہے ۔ مسلم فرقہ کے ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے روزنامہ ’’گارجین‘‘ نے خبر دی ہے کہ حال ہی میں دو ہزار پاؤنڈ( دو لاکھ روپئے ) برطانوی صیانتی خدمات نے 6ہفتے کی مدت میں ایک مسجد کی جاسوسی کرنے پر ادا کئے ہیں ۔ تاہم ان ادائیگیوں کو سراغوں کے جمع کرنے کیلئے استعمال کیا جارہاہے تاکہ ان کی بنیاد پر خطرے سے دوچار افراد کو خبردار کیا جاسکے ۔ خبر کے بموجب اس اقدام کو سرکاری عہدیداروں کا تعاون حاصل ہے اور اس کا مقصد انسداد دہشت گردی ہے ‘ یہ پروگرام ان مخبروں کی تعداد اور ان کو ادا کی جانے والی رقم کا انکشاف کئے بغیر چلایا جارہاہے ۔

TOPPOPULARRECENT