Tuesday , August 22 2017
Home / پاکستان / مشرف نے مشترکہ حکومت کے قیام کیلئے خفیہ معاہدہ کی پیشکش کی تھی : نواز شریف

مشرف نے مشترکہ حکومت کے قیام کیلئے خفیہ معاہدہ کی پیشکش کی تھی : نواز شریف

اسلام آباد۔ 22 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے وزیراعظم نواز شریف نے آج ایک اہم بیان دیتے ہوئے کہا کہ سابق فوجی حکمراں پرویز مشرف نے انہیں ملک واپس آنے کے لئے ایک ’’خفیہ معاہدہ‘‘ کی پیشکش کی تھی تاکہ ایک مشترکہ حکومت کا قیام عمل میں لایا جاسکے۔ نواز شریف 2008ء کا تذکرہ کررہے تھے جس وقت وہ (شریف) سعودی عرب میں جلاوطنی کی زندگی گزار رہے تھے۔ انگریزی اخبار ’’ڈان‘‘ کی ایک رپورٹ کے مطابق نواز شریف نے حکمراں جماعت پاکستان مسلم لیگ (ن) کی پارلیمانی کمیٹی کے اجلاس میں کل شرکت کی تھی جہاں انہوں نے یہ انکشاف کیا اور کہا کہ مشرف نے 2007ء میں ان سے ایک ’’خفیہ معاہدہ‘‘ کرنے کی خواہش ظاہر کی تھی۔ انہوں نے راست طور پر معاہدہ کی پیشکش کی تھی لیکن  میں نے انکار کردیا تھا۔ انہوں نے مزید کہا کہ مشرف ان سے ملاقات کے خواہاں تھے اور کئی بار ملاقات کی کوششیں کرچکے تھے۔ یاد رہے کہ جنرل مشرف نے 1999ء نواز شریف حکومت کا تختہ پلٹ دیا تھا جس کے بعد نہ صرف نواز شریف بلکہ ان کے متعدد ارکان خاندان کو 2007ء میں پاکستان واپسی سے قبل سعودی عرب میں پناہ لینے پر مجبور ہونا پڑا تھا۔

TOPPOPULARRECENT