Friday , October 20 2017
Home / شہر کی خبریں / مشن بھاگیرتا اسکیم سے مرکزی حکومت متاثر

مشن بھاگیرتا اسکیم سے مرکزی حکومت متاثر

مقررہ وقت پر کام مکمل کرنے کی ہدایت ‘کنٹراکٹرس کو ترغیبات‘ چیف منسٹر کا جائزہ اجلاس
حیدرآباد۔ 17اکٹوبر ( سیاست نیوز) چیف منسٹر کے سی آر نے کہا کہ تلنگانہ کی مشن بھاگیرتا اسکیم سے مرکزی حکومت متاثر ہے ۔ ملک کی 6ریاستوں نے اپنی ریاستوں میں اس اسکیم کی تقلید کرنے کا جائزہ لیا ہے ۔ اسکیم کی تکمیل سے سال کے 12ماہ کے دوران نلوں کے ذریعہ گھروں میں 24گھنٹے پینے کا پانی سربراہ ہوگا ۔انہوں نے مقررہ وقت پر کاموں کی تکمیل کرنے والے کنٹراکٹرس کو دیڑھ فیصد ترغیبی اعزازی معاوضہ بطور انعام دینے کا اعلان کیا  ۔ چیف منسٹر کے سی آر نے آج ایم سی آر ایچ آر ڈی میں مشن بھاگیرتا پر جائزہ اجلاس طلب کیا ۔ اس موقع پر مشن بھاگیرتا کے وائس چیرمین وی پرکاش ریڈی ‘ کونسل کے وھپ پی راجیشور ریڈی ‘ رکن اسمبلی جلگم وینکٹ راؤ ‘ حکومت کے پرنسپال سکریٹری ایس پی سنگھ کے علاوہ دوسرے عہدیدار موجود تھے ۔ چیف منسٹر نے ریاست کے مختلف مقامات پر تعمیر ہونے والے انٹک ویلس ‘ واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس ‘ پائپ لائن کی تنصیب ‘ برقی سب اسٹیشن کی تعمیرات کا جائزہ لیا اور عہدیداروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ کی مشن بھاگیرتا اسکیم کو ملک بھر میں کافی مقبولیت حاصل ہوگئی ہے ۔ مرکزی حکومت اس اسکیم سے کافی متاثر ہے اور اس کو قومی سطح پر روشناس کرانے کا سنجیدگی سے جائزہ لے رہی ہے ۔ ہندوستان کی چھ ریاستوں نے اس اسکیم پر عمل آوری کا جائزہ لیا ہے ۔ مشن بھاگیرتا کو مختلف مالیاتی اداروں نے 22ہزار کروڑ روپئے قرض دینے سے اتفاق کیا ہے ۔ اس کے علاوہ مزید 7 تا 8ہزار کروڑ روپئے قرض حاصل ہوگا ۔ مزید فنڈز کی ضرورت پڑنے پر بجٹ کے ذریعہ رقومات مختص کئے جائیں گے ۔ چیف منسٹر کے سی آر نے کہا کہ مشن بھاگیرتا کیلئے فنڈز کی کوئی کمی نہیں ہے لہذا انہوں نے مقررہ وقت پر تعمیری  کاموں کی تکمیل کرنے پر زور دیا اور مقررہ وقت پر کاموں کی تکمیل پر کنٹراکٹرس کو دیڑھ فیصد اعزازی معاوضہ دینے کا بھی وعدہ کیا ۔ پائپ لان کی تنصیب کے موقع پر فائبر اپٹک کیبل بھی اس میں شامل کرنے پر زور دیا ۔ ان کاموں کیلئے آئی ٹی شعبہ سے تکنیکی اُمور پر رائے حاصل کرنے کا مشورہ دیا ۔ چیف منسٹر نے کہا کہ مشن بھاگیرتا کیلئے کوئی علحدہ  وزیر نہیں ہے ‘ یہ محکمہ ان کی زیر نگرانی ہے ۔ لہذا وہ وائس چیرمین مشن بھاگیرتا وی پرشانت ریڈی کو کابینی عہدہ دے چکے ہیں اور وہی عہدیداروں کا اجلاس طلب کرتے ہوئے کاموں کا جائزہ لیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT