Saturday , October 21 2017
Home / ہندوستان / مشیران قومی سلامتی مذاکرات منسوخ کرنے کا مطالبہ

مشیران قومی سلامتی مذاکرات منسوخ کرنے کا مطالبہ

نئی دہلی ۔ 18 اگست (سیاست ڈاٹ کام) وی ایچ پی نے آج کہا کہ مشیران قومی سلامتی سطح کی پاکستان کے ساتھ بات چیت منسوخ کی جانی چاہئے کیونکہ ہم پاکستان کے ساتھ جنگ جیسے ماحول میں ہیں اور انتباہ دیا کہ کارگل جنگ کا اعادہ بھی ممکن ہے۔ دائیں بازو کی ہندو تنظیم نے حکومت سے خواہش کی کہ پاکستان کے بارے میں اپنی پالیسی پر نظرثانی کرے اور کہا کہ اسے تبدیل ہونے کی ضرورت ہے تاکہ اپنے پڑوسی ملک سے نمٹنے کے قابل ہوسکے۔ وی ایچ پی نے کہا کہ ہمیں اس ملک کو پہلے سبق سکھانا ہوگا۔ حکومت مشیران قومی سلامتی سطح کی بات چیت منسوخ کردے۔ موجودہ ماحول بات چیت کے لئے سازگار نہیں ہے۔ مذاکرات اور جنگ ایک ساتھ نہیں ہوسکتے۔ آج جنگ جیسا ماحول ہے۔

اس لئے ہمیں اس سے اسی کے مطابق نمٹنا ہوگا۔ وی ایچ پی کے جوائنٹ جنرل سکریٹری سریندر جین نے کہا کہ پہلے پاکستان کو سبق سکھاؤ اس کے بعد بات چیت کرو اس کے اچھے نتائج برآمد ہوں گے ورنہ ہمیں اندیشہ ہیکہ کارگل جیسی جنگ دوبارہ ہوسکتی ہے۔ پاکستان کے بارے میں ہندوستان کی پالیسی پر نظرثانی کی خواہش کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہندوستان کی پالیسی پر نظرثانی اور اسے تبدیل کرنا ضروری ہے۔ یہ کام جتنا جلد ہوسکے اتنا ہی بہتر ہوگا، حکومت کے مفاد میں ہوگا۔ پاکستان سے نمٹنے کیلئے طاقتور پالیسی ضروری ہے۔ وی ایچ پی قائد نے کہا کہ جو لوگ وزیراعظم نریندر مودی کے مسجد کے دورہ کو فرقہ وارانہ رنگ دے رہے ہیں ، یہ کہتے ہوئے کہ ایسا کرنا نقلی سیکولرسٹوں کا کام ہے، وہ غلط ہیں۔

TOPPOPULARRECENT