Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / مظفرنگر کے فائرنگ واقعہ میں 200 افراد کیخلاف مقدمہ

مظفرنگر کے فائرنگ واقعہ میں 200 افراد کیخلاف مقدمہ

مظفر نگر ۔ 10  فبروری۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) ضلع شاملی میں ایس پی ورکرس کی جانب سے خوشی منانے کیلئے کی گئی فائرنگ میں ایک 8 سالہ لڑکے کی موت کے سلسلہ میں 200 افراد کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے اور پانچ مفرور ملزمین کے بارے میں اطلاع پر رقمی انعام کا اعلان کیا گیا ۔ سپرنٹنڈنٹ آف پولیس وجئے بھوشن نے آج کہاکہ 200 غیرشناخت شدہ افراد کے خلاف ایک کیس تعزیرات ہند کی مختلف دفعات کے تحت درج کیا گیاہے ۔ انھوں نے کہاکہ 5000/- روپئے کا انعام پانچ مفرور ملزمین کے تعلق سے اطلاع کی فراہمی پر دیا جائے گا ۔ یہ ملزمین نومنتخب بلاک پرمکھ کا شوہر غیور ، سلیم ، ممتاز ، مہتاب اور نفیس ہیں ۔ دریں اثناء چیف منسٹر اُترپردیش اکھلیش یادو نے فائرنگ کے متوفی لڑکے کے ورثاء کیلئے پانچ لاکھ روپئے کی مالی اعانت کا اعلان کیا۔ سرکاری ترجمان نے بتایا کہ چیف منسٹر نے کہا کہ خاطیوں کو بخشا نہیں جائے گا اور اُن کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی ۔ اس کیس میں چار دیگر ملزمین پہلے ہی گرفتار کئے جاچکے ہیں۔

 

پاکستانی عدالت میں ہیڈلی کی گواہی کی ہندوستانی تجویز ممکن

نئی دہلی ۔ 10 فبروری(سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان امکان ہیکہ پاکستان سے خواہش کرے گا کہ لشکرطیبہ کارکن ڈیوڈ ہیڈلی کی ممبئی دہشت گرد حملہ کے بارے میں مقدمہ کی پاکستان میں سماعت کے دوران، شہادت امریکہ سے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ حاصل کریں تاکہ دہشت گرد حملہ کے خاطیوں کو انصاف کے کٹہرے میں کھڑا کرنے کیلئے ٹھوس ثبوت حاصل ہوسکیں۔

TOPPOPULARRECENT