Wednesday , October 18 2017
Home / Top Stories / معذورین کی صلاحیتوں سے تابناک مستقبل

معذورین کی صلاحیتوں سے تابناک مستقبل

آئیڈیل انفارمیشن سنٹر برائے معذورین میں دعوت افطار ، مسرس محمد محمود علی و ظہیر الدین علی خاں کا خطاب
حیدرآباد ۔ 20 ۔ جون : ( دکن نیوز ) : جناب محمد محمود علی ڈپٹی چیف منسٹر ریاست تلنگانہ نے آئیڈیل انفارمیشن سنٹر برائے معذورین ( نابینا ، گونگے ، بہرے ) طلباء اور طالبات اور ان کے والدین اور روزہ داروں کے لیے منعقدہ دعوت افطار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس ملک اور ریاست تلنگانہ میں ہم اپنی زندگی گذار رہے ہیں ۔ یہ ریاست گنگا جمنا تہذیب اور روا داری کو بڑھا وا دیتا ہے ۔ جہاں ہندو ، سکھ اور عیسائی بھائی اپنے اپنے تہواروں میں ایک دوسرے کو مدعو کر کے روا داری اور اخوت کا مظاہرہ کرتے ہیں ۔ اسی طرح مسلمان بھی اپنے عیدین میں انہیں مدعو کر کے روا داری اور بھائی چارگی کا عظیم مظاہرہ کرتے ہیں ۔ ایسے میں گونگے اور بہرے و معذورین کے لیے دعوت افطار اور انہیں خوشیوں میں شامل کرنا اللہ اور بندوں کے نزدیک بھی اہمیت کا حامل ہے ۔ میں اس مساعی پر آئی آئی سی ڈی کو مبارکباد دیتا ہوں ۔ تعلیمی مظاہرہ بڑے ہی دلنشین انداز سے ( ترانوں کے ذریعہ ) پیش کیا ان کی اس سعی و جہد کو دیکھ کر ڈپٹی چیف منسٹر دم بخود ہوگئے اور آئی آئی سی ڈی کے ذمہ دار اور ان کی ٹیم کو مبارکباد دی ۔ اس موقع پر جناب محمد محمود علی سے ان معذور طلباء کا تعارف کروایا گیا جو کمپیوٹرس اور اعلیٰ تعلیم سے وابستہ ہیں ۔ جناب ظہیر الدین علی خاں منیجنگ ایڈیٹر روزنامہ سیاست نے آئیڈیل انفارمیشن سنٹر ڈسبلیڈ کے تحت جو معذور طلباء وطالبات سائنس و ٹکنالوجی کی تعلیم حاصل کرتے ہوئے اپنے پیروں پر آپ کھڑے ہو کر معاشی موقف اور دوسروں کی مدد کو اپنا مقصد بنائے ہیں انہیں مبارکباد دی اور کہا کہ مجھے مسلسل تین سالوں سے ان کی دعوت افطار اور دوسرے پروگرامس میں شریک ہونے کا موقعہ مل رہا ہے ۔ اللہ تعالیٰ آئی آئی سی ڈی کی مساعی اور معذورین کے لیے جو کوشش کی جارہی ہے اس کو قبول فرمائے ۔ جناب ظفر جاوید سکریٹری سلطان العلوم ایجوکیشنل سوسائٹی کے ہاتھوں ویب سائٹ کا افتتاح عمل میں آیا ۔ جس میں آئی آئی سی ڈی کا تعارف ، اور آئی آئی سی ڈی کے مختلف معلومات اور کارکردگی ، رہبری و رہنمائی و دیگر امور کے ساتھ انہیں رشتہ ازدواج سے منسلک کرنے کے لیے رہبر و دیگر امور کو شامل کیا گیا ہے ۔ انہوں نے افتتاح انجام دینے کے بعد کہا کہ اللہ تعالیٰ نے ان معذورین کو ایک نعمت سے محروم کیا ہے مگر کئی نعمتیں ان میں ودیعت کردی ہیں ۔ انہوں نے آئی آئی سی ڈی کی مساعی پر مبارکباد دی ۔ جناب حامد محمد خاں امیر جماعت اسلامی ہند تلنگانہ و اڈیشہ نے کہا کہ قدرت کا یہ نظام ہے کہ جب وہ کسی انسان کو ایک صلاحیت سے محروم کرتا ہے تو اسے دوسری صلاحیت وافر مقدار میں عطا کرتا ہے ۔ انہوں نے ان طلباء وطالبات کی عصری اور دینی علوم میں دلچسپی کو قدر کی نگاہوں سے دیکھنے پر زور دیا کہ اور کہا کہ وہ موجودہ ٹکنالوجی کا بھر پور استعمال کرتے ہوئے اپنی اخلاقی دینی ، صالح اعتقادات ، تعلیم و تربیت سے جڑے ہوئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ان میں سائنس و ٹکنالوجی کے میدان میں دلچسپی زیادہ پائی جارہی ہے ۔ یہاں تک کہ وہ کمپیوٹرس کی مدد سے ایسے ڈیزائن بنا رہے ہیں جہاں دیکھنے کے بعد آنکھیں ششدر رہ جاتی ہیں ۔ حافظ رشاد الدین ناظم شہر جماعت اسلامی ہند گریٹر حیدرآباد اور صدر نشین آئیڈیل انفارمیشن سنٹر فار ڈسبیلڈ نے کہا کہ کسی انسان میں اگر دیکھنے ، سونچنے اور بولنے کی قوت موجود ہو تو وہ ان صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے فلاحی امور انجام دے سکتا ہے لیکن یہ افراد جو کہ ان نعمتوں سے محروم ہیں اس کے باوجود ان کی صلاحیتیں بڑی تابناک ہیں ۔ ملت اسلامیہ کے لیے یہ ضروری ہے کہ اہل خیر ان کے حق میں اپنا تعاون دراز کریں ۔ تقریبا 1000 سے زائد معذورین نے دعوت افطار میں شرکت کی ۔ شہ نشین پر محمد اظہر الدین ، وحید داد خاں ، سلطان محی الدین ، عبدالمجید ، ڈاکٹر منور سلطانہ ، محمد امام تحسین اور دوسرے موجود تھے ۔ حافظ و قاری نابینا محمد امتیاز کی تلاوت اور نابینا شفیع احمد کی نعت شریف سے پروگرام کا آغاز ہوا ۔ ڈیسنٹ فنکشن ہال ان معذور طلباء اور روزہ دار مرد و خواتین سے کچھا کھچ بھرا ہوا تھا ۔ جناب تبریز بخشی سکریٹری نے کارروائی چلائی ۔ یاسمین اختر اور نازیہ بیگم نے سائن لینگویج میں تقاریر کا ترجمہ کیا ۔ عرفان منیار ، نوید الرحمن ، معین الدین ، زکی الحسن ، اشفاق الدین نے شرکاء کا استقبال کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT