Monday , August 21 2017
Home / جرائم و حادثات / معمول کے مطالبہ پر پولیس سے شکایت نوجوان کے قتل کی وجہ ؟

معمول کے مطالبہ پر پولیس سے شکایت نوجوان کے قتل کی وجہ ؟

حیدرآباد ۔ 3 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز ) : فرینڈلی پولیسنگ پالیسی کی عمل آوری کے اس شہر حیدرآباد میں پولیس سے شکایت کرنا ایک نوجوان کی ہلاکت کا سبب بن گیا ۔ مصروف اوقات میں ایک ہوٹل میں نوجوان کا بے رحمی سے قتل کردیا گیا جس نے غنڈہ عناصر کو معمول دینے سے انکار کردیا تھا ۔ یہ نوجوان محمد سہیل ہے ۔ جس کا کل رات رنگاریڈی کلکٹریٹ میں بے رحمی سے قتل کردیا گیا ۔ اس نوجوان کی قتل کی وجہ پولیس سے شکایت تصور کی جارہی ہے ۔ اور اس کے علاوہ شکایت کے 6 ماہ بعد بھی پولیس پنجہ گٹہ کی جانب سے کارروائی نہ کرنا بھی قتل کی وجہ مانا جاتا ہے ۔ اس واقعہ سے غیر سماجی عناصر کے حوصلے بلند ہوگئے ۔ تاہم انتہائی تعجب خیز بات تو یہ ہے کہ اے سی پی پنجہ گٹہ قاتلوں کو روڈی نہیں مانتے اور انہوں نے سہیل کی جانب سے پولیس میں شکایت کی بات کو مسترد کردیا جبکہ سیف آباد پولیس کا کہنا ہے کہ سہیل نے پنجہ گٹہ پولیس میں شکایت کی تھی اور سمجھا جارہا ہے کہ ان غنڈہ عناصر نے ہی مبینہ طور پر سہیل کا قتل کیا ہے جن کے خلاف یہ پولیس سے رجوع ہوا تھا ۔ انسپکٹر سیف آباد مسٹر پورنا چندر نے بتایا کہ قاتلوں کی شناخت کا عمل جاری ہے ۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ پولیس بہت جلد ان قاتلوں کو گرفتار کریگی ۔ بتایا جاتا ہے کہ سہیل حافظ بابا نگر علاقہ کا ساکن تھا ۔ پیشہ سے فٹ پاتھ پر آرٹیفیشل جویلری کا کاروبار کرتا تھا ۔ اس نوجوان کو علاقہ کے چند غنڈہ عناصر معمول دینے دباؤ ڈال رہے تھے اور 60 ہزار روپئے معمول کا مطالبہ کیا تھا ۔ معمول کیلئے بڑھتے دباؤ کو دیکھ کر سہیل نے 6 ماہ قبل ان افراد کے خلاف پولیس سے شکایت کی تھی ۔ تاہم تاحال کارروائی نہیں کی گئی اور سہیل پر دباؤ بڑھتا گیا ۔ ہراسانی سے تنگ آکر سہیل نے کل پنجہ گٹہ پولیس سے رجوع ہو کر کارروائی میں تاخیر نہ کرنے کی خواہش کی اور ہراسانی کا تذکرہ کیا جس کے بعد پولیس نے سمجھا جاتا ہے کہ پولیس نے ان غنڈہ عناصر پر دباؤ ڈالا اور یہ نتیجہ نکل آیا ۔ غنڈہ عناصر نے جن کے خلاف سہیل نے شکایت کی تھی اس کے قتل میں ان کے مبینہ رول کا شبہ ظاہر کیا جارہا ہے ۔ اور پولیس کی شک کی سوئی بھی انہی افراد کے خلاف گھوم رہی ہے ۔ کل رات گھر واپس ہورہے سہیل کو پہلے گاڑی سے ٹکر دی گئی اور وہ جیسے ہی سڑک پر گر گیا اس کے سرپر وار کیا گیا ۔ بیچ بچاؤ کیلئے وہ ایک ہوٹل میں گھس پڑا تھا تاہم اس کا قتل کردیا ۔ سہیل کی غنڈہ عناصر کے تعلق سے شکایت کی وضاحت پر پنجہ گٹہ پولیس انسپکٹر سے ربطہ قائم نہ ہوسکا جس کے سبب اے سی پی پنجہ گٹہ سے ربط قائم کرنے پر انہوں نے ایسی کسی شکایت کی بات کو مسترد کردیا ۔ پولیس عہدیداروں کا مبینہ رویہ کمشنر پولیس حیدرآباد سٹی اور چیف منسٹر تلنگانہ کے اس خواب کو ناکام بنادے گا جس میں حیدرآباد کو پرسکون اور مثالی عالمی معیار کا شہر بنانے کے اقداجات جاری ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT