Thursday , August 17 2017
Home / ہندوستان / مغربی بنگال کے وزیر اغذیہ کو ٹکر دینے کی ناکام کوشش

مغربی بنگال کے وزیر اغذیہ کو ٹکر دینے کی ناکام کوشش

ہند۔بنگلہ سرحد پر سرگرم گائے کے اسمگلرس پر شبہ
کولکتہ۔20 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) مغربی بنگال کے وزیر اغذیہ جیوتی پربھو ملک نے آج یہ الزام عائد کیا ہے کہ ہند۔بنگلہ دیش کی سرحد پر سرگرم گائے کے اسمگلرس جس کے خلاف ریاستی حکومت سخت کارروائی کررہی ہے، انہیں نشانہ بنانے کی کوشش میں ہیں اور پرنا میں سالٹ لیک علاقہ میں ایک کار نے انہیں ٹکر دینے کی کوشش کی ہے۔ ریاستی وزیر نے بتایا کہ میں جمعہ کی صبح سالٹ لیک میں کے جی پارک کے اطراف چہل قدمی کررہا تھا کہ اچانک ایک ٹاٹا سومو گاڑی برق رفتاری کے ساتھ میرے قریب آئی اور مجھ سے ٹکرانے کی کوشش میں تھی کہ میں نے فٹ پاتھ پر چھلانگ لگادی۔ انہوں نے کہا کہ اس واقعہ کے بعد یہ محسوس ہورہا ہے کہ گائے کے اسمگلرس سخت کارروائی سے باز رکھنے کیلئے مجھے خوفزدہ کرنا چاہتے ہیں۔ لیکن اس طرح کی بزدلانہ کارروائی سے گائے کے اسمگلرس کے خلاف سخت کارروائی کو روکا نہیں جائیگا اور چیف منسٹر ممتا بنرجی کی ہدایت کے مطابق ہند۔بنگلہ دیش سرحد پر سرگرم ان اسمگلرس کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ گزشتہ چند ماہ سے دھمکی آمیز خطوط وصول ہوئے ہیں جسے بدھانگر پولیس اسٹیشن کے حوالے کردیا گیا جبکہ حادثہ میں ہلاک کرنے کی ناکام کوشش کے بعد وزیر موصوف کی سکیوریٹی میں اضافہ کردیا گیاہ ے اور سی سی ٹی وی کے ذریعہ مبینہ حملہ آور کی شناخت کی جارہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT