Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / مقتول جرنلسٹ کے داؤد اور آئی ایس آئی سے تعلقات

مقتول جرنلسٹ کے داؤد اور آئی ایس آئی سے تعلقات

سی بی آئی کی تازہ چارج شیٹ میں چھوٹا راجن کا نقطہ نظر
ممبئی 13 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) ممبئی کے جرنلسٹ جے ڈے قتل کیس کے اصل ملزم گینگسٹر چھوٹا راجن کا خیال تھا کہ سینئر کرائم رپورٹر ان کے حریف داؤد ابراہیم اور آئی ایس آئی کیلئے کام کررہے ہیں۔ سی بی آئی کی پیش کردہ چارج شیٹ میں یہ انکشاف کیا گیا۔ چھوٹا راجن کی ہدایت پر مسٹر ڈے (Dey) کا قتل سب اربن پووائی میں 11 جون 2011 ء کو کیا گیا تھا۔ سی بی آئی کے مطابق راجن نے ایک شخص منوج سے ٹیلیفون پر کہا تھا کہ ایک اور جرنلسٹ جگن ووا (شریک ملزم) نے یہ اطلاع دی ہے کہ جے ڈی کی تحریر گمراہ کن ہیں اور وہ دوسری گینگ سے رابطہ میں ہے جوکہ دغابازی کررہا ہے۔ سی بی آئی نے گزشتہ ہفتہ مقامی عدالت میں پیش کردہ چارج شیٹ میں راجن کے ٹیلیفون مذاکرات کی ریکارڈنگ بھی منسلک کی ہے جس میں راجن کو یہ کہتے ہوئے سنا گیا کہ ڈے کوئی ٹھیک آدمی نہیں ہے اور وہ داؤد اور آئی ایس آئی کیلئے کام کررہا ہے اور جگنا نے بھی یہ باور کروایا ہے کہ وہ (ڈے) ایک دغاباز شخص ہے۔ ڈے کی اہلیہ نے سی بی آئی سے کہا ہے کہ قتل سے ایک ماہ قبل ان کے شوہر افسردہ تھے اور ایک موقع پر کہا تھا کہ وہ موت کے قریب پہنچ گئے ہیں لیکن بیماری کی وجہ سے نہیں۔ سی بی آئی چارج شیٹ میں ان جرنلسٹوں کے بیانات بھی شامل ہیں جن سے قتل کے بعد راجن نے ٹیلیفون پر بات چیت کی تھی۔ ایک جرنلسٹ سے راجن نے کہا تھا کہ ڈے کی ہلاکت پر انھیں افسوس ہے۔ ایک جرنلسٹ کے حدود ہوتے ہیں اگر تم جھوٹی کہانیاں تحریر کرو گے تو مشکل میں پھنس جاؤ گے۔ راجن کا دعویٰ ہے کہ ڈے نے غداروں سے ساز باز کرلی تھی لہذا قتل کے سوا کوئی چارہ کار نہیں تھا۔

TOPPOPULARRECENT