Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / مقدس کتاب کی بے حرمتی واقعہ کا ملزم ہاسپٹل میں شریک

مقدس کتاب کی بے حرمتی واقعہ کا ملزم ہاسپٹل میں شریک

چندی گڑھ ۔/27اکٹوبر، (سیاست ڈاٹ کام) فرید کوٹ کے بارگاری دیہات میں ایک مقدس کتاب کی بے حرمتی کے واقعہ میں گرفتار دو بھائیوں میں سے ایک ملزم کو ریڑھ کی ہڈی میں شدید تکلیف پر آج ہاسپٹل میں شریک کروادیا گیا ہے۔ پولیس نے بتایا کہ رویندر سنگھ کو PGIMER سے رجوع کردیا گیا ہے۔ فرید کوٹ کی ایک عدالت نے کل پنج گرین خورد کے متوطن رویندر سنگھ اور جسویندر سنگھ کو 9اکٹوبر تک عدالتی تحویل میں دے دیا تھا تاہم دونوں بھائیوں نے پنجاب پولیس کے الزامات سے انکار کردیا اور کہا کہ وہ بے گناہ ہیں جبکہ ملزمین کے والدین اور دیہاتیوں کے علاوہ سکھ برادری نے یہ ادعا کیا ہے کہ انھیں ( بھائیوں ) کو کیس میں پھنسایا گیا ہے۔ واضح رہے کہ پولیس نے ریاست کے مختلف معامالات بشمول فرید کوٹ، سنگور، لدھیانہ، امرتسر، ترن تارن، بھٹنڈا اور فیروز پور میں پیش آئے بے حرمتی کے واقعات میں اب تک 6افراد کو گرفتار کیا ہے۔ ان واقعات کے خلاف شدت پسند تنظیموں نے سڑکوں پر احتجاج کرتے ہوئے عام زندگی کو درہم برہم کردیا تھا۔ پولیس نے یہ شبہ ظاہر کیا ہے کہ حالات کو بگاڑنے کیلئے بے حرمتی واقعات میں بیرونی ہاتھ بھی ہوسکتا ہے۔ سکھ برادری، اپوزیشن کانگریس اور عام آدمی پارٹی کی تنقیدوں کے بعد حکومت پنجاب نے ڈائرکٹر جنرل پولیس سمیدھ سنگھ سائنی کا تبادلہ کرتے ہوئے سریش ارورہ کا تقرر عمل میں لایا ہے۔

TOPPOPULARRECENT