Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / ملائم سنگھ یادو کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کی ہدایت

ملائم سنگھ یادو کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کی ہدایت

انسپکٹر جنرل پولیس کو دھمکیاں دینے کی عدالت میں شکایت
لکھنو ۔ 16 ۔ ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایک مقامی عدالت نے آج پولیس کو یہ ہدایت دی ہے کہ آئی جی رتبہ کے ایک عہدیدار امیتابھ ٹھاکر کو مبینہ دھمکی دینے پر سماج وادی پارٹی سربراہ ملائم سنگھ یادو کے خلاف ایف آئی آر درج کرتے ہوئے اس واقعہ کی تحقیقات کریں، جس پر زبردست تنازعہ پیدا ہوگیا ہے ۔ چیف جوڈیشنل مجسٹریٹ سوم پربھا نے امیتابھ ٹھاکر کی شکایت کو سماعت کیلئے قبول کرتے ہوئے ایس ایچ اور ہزاری گنج کو ہدایت دی کہ تعزیرات ہند کی محتلف دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کریں اور بعد تحقیقات عدالت کو مطلع کیا جائے جبکہ 156(3) IPC سیکشن کے تحت پولیس کو ایف آئی آر درج کرنے کی ہدایت کا اختیار مجسٹریٹ کو حاصل ہے۔ تاہم اسٹیشن ہاوز آفیسر ہزاری گنج نے بتایا کہ ملائم سنگھ کے خلاف یہ شکایت محض شہرت حاصل کرنے کیلئے داخل کی گئی ۔ تاہم انہوں نے یہ وضاحت نہیں کی کہ ایف آئی آر درج کیا گیا ہے یا نہیں۔ ملائم سنگھ یادو کی جانب سے ٹیلیفون پر سنگین نتائج کی دھمکیاں دینے پر ایف آئی آر درج کرنے سے اترپردیش پولیس کے انکار کے بعد امیتابھ ٹھاکر عدلت سے رجوع ہوئیں ہیں اور بتایا کہ ان کے الزامات کو نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔ واضح رہے کہ اترپردیش حکومت نے ٹھاکر کو جاریہ سال 13 جولائی کو اس وقت خدمات سے معطل کردیا تھا جب انہیں عصمت ریزی کیس میں ماخوذ کرنے پر سی بی آئی تحقیقات کیلئے مرکزی وزارت داخلہ سے رجوع ہوئے تھے جس کے بعد ٹھاکر اور ریاستی حکومت کے درمیان رسہ کشی شروع ہوگی اور انہیں 200 صفحات پر مشتمل چارج شیٹ پیش کرتے ہوئے ویجلنس تحقیقات کا حکم دیدیا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT