Thursday , October 19 2017
Home / شہر کی خبریں / ملازمین کی تقسیم کا معاملہ لیت و لعل کا شکار

ملازمین کی تقسیم کا معاملہ لیت و لعل کا شکار

صدرنشین کمیٹی کملا ناتھن کا گھیراؤ، جانبداری کا الزام
حیدرآباد۔ یکم اکتوبر (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ کی تشکیل کے بعد سرکاری ملازمین کی تقسیم کیلئے قائم کردہ کمیٹی کے صدرنشین مسٹر کملا ناتھن کا ملازمین کی تقسیم میں ہونے والی تاخیر کے خلاف ٹی این جی اوز یونین کی زیرقیادت زائد از 34 محکمہ جات کے ملازمین یونین قائدین نے گھیراؤ کیا۔ مسٹر کملا ناتھن پر ملازمین کی تقسیم کے معاملے میں جانبداری کا الزام عائد کیا گیا۔ احتجاجی ملازمین یونین قائدین نے مسٹر کملا ناتھن کمیٹی کو سیما۔ آندھرا ملازمین کمیٹی سے تعبیر کیا اور بتایا کہ محکمہ جات ٹورازم، انڈومنٹ، ریوینیو، پے اینڈ اکاؤنٹس، ٹریژری، ہاؤزنگ، ٹیکنیکل ایجوکیشن اور اسکولس ایجوکیشن و دیگر محکمہ جات کے ملازمین کی تقسیم میں بعض ناانصافیوں کے واقعات پیش آئے جس کے خلاف ان کا گھیراؤ کیا گیا لیکن (کملاناتھن) کوئی تیقن دیئے بغیر وہاں سے روانہ ہوگئے۔ اس دوران ٹی این جی اوز یونین سٹی برانچ صدر کے وینکٹیشورلو، اور خازن وینو مادھو کے علاوہ نرسمہا چاری، صدر بیورو آف اکنامکس ملازمین یونین نے بتایا کہ آندھرا پردیش میں مخلوعہ جائیدادوں کے مواقع رہنے کے باوجود آندھرا پردیش ملازمین کو تلنگانہ میں ہی تعینات کیا جارہا ہے۔ ان قائدین نے کہا کہ آندھرا پردیش میں خدمات انجام دینے والے تلنگانہ گزیٹیڈ عہدیداروں و ملازمین اور درجہ چہارم ملازمین کو آندھرا سے واپس کرکے تلنگانہ میں تعینات کرنے کا گزشتہ زائد از ایک سال سے مطالبہ کیا جارہا ہے لیکن صدرنشین کمیٹی مسٹر کملاناتھن ملازمین یونین قائدین کی نمائندگیوں پر کوئی غوروخوض نہ کرکے ان کے مطالبات کو نظرانداز کررہے ہیں، لہذا مسٹر کملاناتھن سے فی الفور ملازمین کی تقسیم میں مکمل انصاف کرنے کا مطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT