Monday , October 23 2017
Home / شہر کی خبریں / ملک میں آج یوم انسداد حشرات امراض تمام مدارس میں بچوں میں ٹبلیٹ البینڈازول کی تقسیم

ملک میں آج یوم انسداد حشرات امراض تمام مدارس میں بچوں میں ٹبلیٹ البینڈازول کی تقسیم

حیدرآباد ۔ 9 ۔ اگست : ( سیاست نیوز ) : قومی سطح پر 10 اگست کو نیشنل ڈی وارمنگ ڈے (یوم) انسداد حشرات منایا جارہا ہے ۔ اس موقع پر ملک کے آنگن واڑی اور دیگر مدارس میں 19-1 سال کے عمر کے بچوں کو حشرات ( کیڑوں ) سے ہونے والے امراض سے حفاطت کے لیے ادویات فراہم کی جائیں گی ۔ ملک کی 27 ریاستیں اور مرکزی زیر انتظام علاقوں میں آنگن واڑی ، سرکاری امدادی اور خانگی مدارس اور غیر آنگن واڑی مدارس میں بچوں کو البینڈازول 400ایم جی چبانے والی ٹبلیٹ کھلائی جائے گی ۔ 17 اگست کو ایک خصوصی مہم کے ذریعہ ایسے بچے جو کہ بیماری کے سبب کسی وجہ کے سبب 10 اگست کو ٹبلیٹ کا استعمال نہ کیا ان کو ٹبلیٹ کھلائی جائے گی ۔ سال گذشتہ 2015 میں ملک کی 11 ریاستوں میں 89 ملین بچوں کو انسداد حشرات ادویات دی گئیں تھیں ۔ جب کہ اس سال فروری تک 179 ملین بچوں کو ادویات دی گئیں ۔ بتایا گیا ہندوستان میں حشرات سے دنیا میں سب سے زیادہ لوگ متاثر ہوتے ہیں چلڈرن ان انڈیا 2012 رپورٹ کے مطابق ہندوستان میں پانچ سال کی عمر کے 48 فیصد بچے حشرات سے ہونے والے امراض سے متاثر ہوئے ہیں ۔۔
ملک میں تمباکو کسان مشکل حالات سے دوچار
اسوچم ، ایف اے آئی ایف اے کی ارکان پارلیمنٹ سے نمائندگی
حیدرآباد ۔ 9 ۔ اگست : ( سیاست نیوز ) : اسوسی ایٹیڈ چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری آف انڈیا ( اسوچم ) اور فیڈریشن آف آل انڈیا فارمر اسوسی ایشن ( ایف اے آئی ایف اے ) نے نئی دہلی میں منعقدہ ایک مذاکرہ میں ارکان پارلیمنٹ سے اس بات کی نمائندگی کی کہ وہ سال 2022 تک کسانوں کی آمدنی میں دگنا اضافہ کے وزیر اعظم کے نشانہ پر کوشش عمل میں لائیں ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے جنرل سکریٹری اسوچم ڈی ایس راوت نے کہا کہ یہ بات حوصلہ افزاء ہے کہ وزیر اعظم مودی نے ملک کے کسانوں کی آمدنی میں دگنا اضافہ کا سال 2022 تک نشانہ مقرر کیا ہے جس کا ہندوستانی معیشت پر بھی بہتر اثر پڑے گا ۔ انہوں نے کہا تمباکو اگانے والے کسانوں کے ساتھ امتیازی سلوک نہیں کیا جانا چاہئے کیوں کہ انہوں نے ہندوستانی معیشت کے تئیں بہتر کارکردگی انجام دی ہے ۔ صدر ایف اے آئی ایف اے بی وی جوارے گوڑہ نے کہا کہ تمباکو کسانوں کے حالات کو حکومت نظر انداز کررہی ہے جب کہ نومبر 2016 میں تمباکو پر قابو کے لیے کانفرنس کا انعقاد عمل میں لایا جارہا ہے ۔ نائب صدر ایف اے آئی ایف اے جی شیشا گیری راؤ نے کہا آج تمباکو کسان سخت پالیسیوں کے سبب مشکل حالات سے دوچار ہیں ۔ انہوں نے تمام ارکان پارلیمنٹ سے اپیل کی کہ وہ سگریٹ پیاکٹس پر 85 فیصد وارننگ قواعد کے خلاف آواز اٹھائیں ۔ مرلی بابو جنرل سکریٹری ایف اے آئی ایف اے نے کہا کہ آزادی کے بعد سے پہلی مرتبہ ایسا ہوا ہے کہ 22 تمباکو کسانوں نے خود کشیاں کی جب کہ تمباکو کسانوں کے حالات بدترین ہوچکے ہیں ۔ حکومت کو چاہئے کہ تمباکو کسانوں کے مسائل حل کریں اور ملک میں بیرونی تمباکو اشیاء پر پابندی لگائیں ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT