Monday , May 1 2017
Home / ہندوستان / ملیالم اداکارہ پر حملہ کا واقعہ

ملیالم اداکارہ پر حملہ کا واقعہ

ملزمین کو پکڑنے کے لیے پولیس کے دھاوے
کوچی۔20 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) جنوبی ہند کی ممتاز فلمی اداکارہ کے اغوا اور جنسی ہراسانی کیس میں ملوث پلسر سنی اور دیگر کی تلاش میں پولیس نے شدت پیدا کردی ہے جبکہ یہ سنسنی خیز کیس پولیس کے لیے معمہ بن گیا ہے۔ پولیس نے بتایا کہ 3 دن قبل پیش آئے اس واقعہ میں اصل ملزم سنی کی اعانت کرنے والے بعض افراد کو حراست میں لے کر پوچھ تاچھ کی جارہی ہے۔ اس واقعہ پر مختلف گوشوں کی جانب سے مذمت کی جارہی ہے۔ تاہم پولیس نے سنی کے ساتھیوں کی گرفتاری پر خاموشی اختیار کرلی ہے۔ فلمی اداکارہ کے کار ڈرائیور مارٹن کو مجرموں کی ٹولی کے ساتھ سازباز کے الزام میں گرفتار کرلیا گیا ہے۔ ٹولی کے ارکان نے فلمی اداکارہ کی کار میں زبردستی داخل ہوکر تقریباً دو گھنٹوں تک انہیں ہراسان کیا تھا۔پولیس نے یہ اطلاع ملنے پر کہ سنی اور اس کے 3 ساتھی مالی اعانت کے لیے اپنے دوستوں سے رجوع ہورہے ہیں۔ ضلع اپوزہا کے مختلف مقامات پر دھاوے کیئے گئے لیکن کوئی کامیابی ہاتھ نہیں لگی۔ دریں اثناء کانگریس رکن اسمبلی پی ٹی تھامس نے یہ ادعا کیا ہے کہ ارتکاب جرم کے کئی گھنٹوں تک ملزم سنی شہر کوچی میں تھا اور ایک فلم پروڈیوسر نے پولیس عہدیداروں کی موجودگی میں انہیں موبائیل فون کال کیا تھا۔ اس واقعہ کی اطلاع ملتے ہی تھامس بھی ایکٹر ڈائرکٹر لال کے مکان پہنچ گئے اور اس وقت تک مجرموں کی ٹولی وہاں سے روانہ ہوگئی تھی۔ مسٹر لال نے کل یہ انکشاف کیا تھا کہ قبل ازیں ایک ملیالم اداکارہ کو ہراسان کرنے کے واقعہ کی ریاستی پولیس سربراہ کو اطلاع دی گئی تھی لیکن کوئی کارروائی نہیں کی گئی جس کے نتیجہ میں ایک اور واقعہ پیش آیا ہے۔ انوہں نے بتایا کہ فلمی اداکاروں نے کل رات یہاں ایک احتجاجی مظاہرہ بھی کیا ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT