Saturday , July 22 2017
Home / Top Stories / ممتا ۔سونیا ملاقات سے بنگال کانگریس قائدین ناراض

ممتا ۔سونیا ملاقات سے بنگال کانگریس قائدین ناراض

کولکاتہ19مئی (سیاست ڈاٹ کام )پارٹی ہائی کمان کے ذریعہ ریاستی لیڈروں کی رائے کو اہمیت نہ دیئے جانے پر بنگال کانگریس کے قائدین پارٹی اعلیٰ قیادت سے برہم نظر آرہے ہیں ۔بنگال کانگریسی لیڈروں کا موقف ہے کہ ترنمول سربراہ اور چیف منسٹر ممتا بنرجی کے ساتھ کانگریس صدر سونیا گاندھی اور نائب صدر راہول گاندھی کی ملاقات کی وجہ سے بنگال میں کانگریس کو شدید نقصان کا سامنا کرنا پڑے گا کیوں کہ ترنمول کانگریس مسلسل کانگریسی لیڈران اور ورکرس پر مسلسل مظالم کررہی ہے۔16مئی کو کانگریس صدر سونیاگاندھی اورراہول کے ساتھ ممتا بنرجی کی ملاقات ہوئی تھی۔یہ ملاقات جولائی میں ہونے والے صدارتی انتخابات کے پیش نظرتمام سیکولر و اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے متفقہ امیدوار کھڑا کرنے کیلئے اتفاق رائے بنانے کیلئے ہوئی تھی۔ریاستی کانگریس قائدین اس ملاقات سے اس لئے برہم ہیں کہ اس طرح کی کسی بھی ملاقات سے پارٹی ورکروں کے حوصلے ٹوٹیں گے ۔پارٹی قیادت کا ماننا ہے کہ اس کی وجہ سے بی جے پی کا فائدہ ہوگا اور کانگریس کا ووٹ بینک بی جے پی کے حق میں چلا جائے گا۔سینئر کانگریسی لیڈر و سابق ممبر پارلیمنٹ دیبا داس منشی نے کہا کہ ایک ایسے وقت میں جب ترنمول کانگریس نے بنگال میں کانگریس کو ختم کرنے کیلئے مہم چلارکھی ہے ،اس کیلئے ہر طرح سے ظلم کررہی ہے ،ان حالات میں پارٹی اعلیٰ قیادت کی ممتا بنرجی سے ملاقات سے پارٹی ورکروں کے درمیان غلط پیغام جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ حالیہ بلدیاتی انتخابات میں ترنمول کانگریس کے غنڈوں سے مار کھانے والے پارٹی ورکروں کو اس ملاقات کے تئیں راضی کرنا کافی مشکل ہے ۔وہ کسی بھی طرح سے ترنمول کانگریس سے معاہدہ کرنے کو تیارنہیں ہیں۔ریاستی کانگریس کے صدر ادھیر رنجن چودھری نے سونیا گاندھی کو خط لکھ کر کہا تھا کہ قومی سیاست کی خاطر ریاستی کانگریس کے مفادات کو قربان نہیں کیا جاسکتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اکثر قومی سیاست کی وجہ سے بنگال کانگریس کے لیڈروں کی آواز کو دبادیا جاتا ہے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT