Monday , April 24 2017
Home / ہندوستان / منسوخ شدہ کرنسی بیرونی ممالک بھیجنے کا انکشاف

منسوخ شدہ کرنسی بیرونی ممالک بھیجنے کا انکشاف

نئی دہلی۔ 9  اپریل (سیاست ڈاٹ کام) منسوخ شدہ کرنسی کو ذریعہ کوریئر بیرونی ممالک بھیجنے والے ریاکٹس کا انکشاف ہوا ہے۔ کسٹمس ڈپارٹمنٹ کے بموجب 500 اور 1000 روپئے کی نوٹوں کا چلن بند کرنے کے بعد اب اسے کوریئر کے ذریعہ بیرونی ملک بھیجا جارہا ہے تاکہ انہیں نئی کرنسی سے تبدیل کیا جاسکے۔ این آر آئیز کو 30 جون تک پرانی کرنسی تبدیل کرنے کی اجازت دی گئی ہے جبکہ اندرون ملک عوام کو یہ سہولت 30 ڈسمبر 2016ء تک حاصل تھی۔ کسٹمس عہدیداروں نے ایسے کئی واقعات کا پتہ چڈیا جہاں پرانی کرنسی کو ذریعہ کوریئر بیرون ملک بھیجا جارہا تھا۔ اب تک ایک ڈکھ سے زائد نوٹ بھی ضبط کئے گئے۔ ایک سینئر عہدیدار نے بتایا کہ لوگ پرانی نوٹوں کو غلط جیسے کتابیں باور کراتے ہوئے بیرون ملک بھیج رہے ہیں۔ وہاں ان کے رشتہ داروں یا دوست احباب کے ذریعہ منسوخ شدہ کرنسی تبدیل کرائی جارہی ہے۔ دو مثالیں دی جہاں پنجاب سے کوریئر آسٹریلیا بھیجا گیا اور یہ بتایا گیا کہ اس میں کتابیں نہیں لیکن اس میں منسوخ شدہ کرنسی تھیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT