Tuesday , October 24 2017
Home / شہر کی خبریں / منشیات مافیا کے اہم ملزم کیلوین کے چونکا دینے والے انکشافات

منشیات مافیا کے اہم ملزم کیلوین کے چونکا دینے والے انکشافات

25 اہم شخصیتوں سے رابطہ کے ثبوت ، تلگو فلمی ہستیوں کے مزید ناموں کی فہرست تیار
حیدرآباد ۔ 15 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز ) : منشیات مافیا کے اہم ملزم کیلوین سے پوچھ تاچھ کے بعد مزید 7 افراد جن میں تلگو فلمی ہستیاں اور آئی ٹی پروفیشنل کو نوٹس جاری کرنے کے لیے دوسری فہرست تیار ہورہی ہے ۔ اکسائز انفورسمنٹ ڈائرکٹر اکون سبھروال نے نارکو ٹیک کنٹرول بیورو کے عہدیداروں کا ہنگامی اجلاس طلب کرتے ہوئے مستقبل کی حکمت عملی کا جائزہ لیا ۔ اکسائز انفورسمنٹ عہدیداروں نے عدالت سے رجوع ہو کر منشیات جرائم کے اہم ملزم کیلوین کے ساتھ قدوس اور وہاب کو 2 دن کی تحویل میں لیا ہے ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ پوچھ تاچھ کے دوران کیلوین نے کئی چونکا دینے والے انکشافات کیے ہیں ۔ کیلوین کے ٹیلی فون سے 25 اہم شخصیتوں کے رابطے کے ثبوت ملے ہیں ۔ ایک سے زائد مرتبہ گہرائی سے جائزہ لینے کے بعد انفورسمنٹ کے عہدیداروں نے پہلے مرحلے میں ٹالی ووڈ کے 12 شخصیتوں ہیرو ، ہیروئن ، ڈائرکٹرس وغیرہ کو نوٹس دی ہے ۔ دو دن کی تحویل میں لیے گئے اصلی ملزم کیلوین سے آج پہلے دن کئی سوالات کئے گئے ۔ اس کا کہنا تھا کہ ٹالی ووڈ کے کئی شخصیتیں اس سے رابطے میں ہیں اور ان سے ٹیلی فون چاٹنگ کے ثبوت بھی موجود ہے ۔ ٹالی ووڈ فلم انڈسٹری کے ٹاپ تین اداکاروں سے جونیر آرٹسٹ تک اس رابطے میں ہیں ۔ ایونٹ منیجرس کے تعاون سے وہ ٹالی ووڈ میں رسائی حاصل کی ہے ۔ اس بات کا بھی انکشاف ہوا ہے کہ انفورسمنٹ ڈائرکٹرس کے عہدیداروں نے کیلوین کے سیل فون کی رازدارانہ معلومات حاصل کرنے کے لیے سیکریٹ فولڈر کو ڈی کوڈ کیا ہے ۔ مزید تین ملزمین آمن نائیڈو ، نکھیل شیٹی ، اور کندن سنگھ کو اکسائز عہدیداروں کی جانب سے پوچھ تاچھ کے لیے پیر کو اپنی تحویل میں لینے کا امکان ہے ۔ منشیات اسکام کے معاملے میں ابھی تک 14 افراد کو پولیس نے گرفتار کیا ہے ۔ ٹالی ووڈ کے 12 شخصیتوں کو نوٹس جاری کرنے کے بعد تلگو فلم انڈسٹری میں بھونچال پیدا ہوگیا ہے ۔ چند شخصیتوں نے نوٹس وصول ہونے کا اعتراف کیا ہے تو چند نے اس کی تردید کی ہے اور چند نے بغیر کسی ثبوت کے انہیں بدنام کرنے کی کوشش کا الزام عائد کیا ۔ چند اداکار اپنے وکلاء سے رابطے میں ہیں تو چند فلم انڈسٹری کی بڑی شخصیتوں سے رجوع ہو کر یہ باور کرانے کی کوشش کررہے ہیں کہ شوٹنگس یا اہم میٹنگس کے دوران اکثر ان کے فون منیجر یا ڈرائیور کے پاس ہوتے ہیں ان کی جانب سے کی گئی غلطیوں کے لیے انہیں ذمہ دار بتانا ٹھیک نہیں ہے ۔

 

TOPPOPULARRECENT