Monday , September 25 2017
Home / شہر کی خبریں / منشیات کی لعنت میں ملوث 1200 بچوں کے والدین کی کونسلنگ

منشیات کی لعنت میں ملوث 1200 بچوں کے والدین کی کونسلنگ

شارٹ فلموں کی تیاری ، تعلیمی اداروں میں شعور بیداری مہم
حیدرآباد /18 اگست ( سیاست نیوز ) منشیات استعمال کرنے والے 1200 بچوں کے والدین کو ایس آئی ٹی کے عہدیداروں نے کونسلنگ دی ہے ۔ منشیات کے خلاف شارٹ فلمیں تیار کرتے ہوئے تعلیمی اداروں میں شعور بیداری کی حکمت عملی تیار کی جارہی ہے ۔ منشیات کا شکار ہونے والے بچوں کے فکرمند والدین اپنے بچوں کو منشیات کے دلدل سے محفوظ رکھنے محکمہ آبکاری کے ایس آئی ٹی دفتر سے رجوع ہو رہے ہیں ۔ بچوں کو اس لعنت سے بچانے کیلئے ایس آئی ٹی کے عہدیداروں والدین کی کونسلنگ کرتے ہوئے انہیں مفید مشورے دے رہے ہیں ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ ابھی تک 1200 والدین کی کونسلنگ کی گئی ہے ۔ اس بات کا بھی پتہ چلا ہے کہ چند طلبہ کے والدین نے اپنے بچوں کے موبائیل فونس ایس آئی ٹی عہدیداروں کے حوالے کئے ہیں ۔ عہدیداروں کی جانب سے ان فونس کو ڈی کوڈ کرتے ہوئے منشیات کے معاملے میں تفصیلات حاصل کر رہے ہیں ۔ موبائیل ڈاٹا کی بنیاد پر 1275 افراد جن میں وی آئی پیز کی تفصیلات اکٹھا کرنے کا علم ہوا ہے ۔ چند دولتمند خاندان کے بچوں اور شہرت یافتہ تعلیمی ادارے ڈرگس کے دلدل میں پھنسے کا انکشاف ہوا ہے ۔ ان تمام سے پوچھ تاچھ کرنے کیلئے ایس آئی ٹی عہدیدار منصوبہ بندی تیار کر رہے ہیں ۔ منشیات کا خاتمہ کرنے کیلئے خصوصی مہم شروع کرنے والے محکمہ آبکاری کے عہدیدار تعلیمی اداروں میں شعور بیدار کرنے کیلئے خصوصی سیشن طلب کرنے پر غور کر رہے ہیں ۔ ڈرگس کے استعمال سے ہونے والے نقصانات اور اس سے پیدا ہونے والی ہمہ اقسام کی بیماریوں سے آگاہ کرنے کیلئے شارٹ ویڈیو فلمس کی نمائش کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اکسائز انفورسمنٹ عہدیداروں کی تحقیقات میں اس بات کا انشکاف ہوا ہے کہ ( ایس ایس ڈی ) اور ( ایم ڈی ایم اے ) دو اقسام کی مہنگی نشیلی اشیاء کے ساتھ ساتھ طلبہ گانجہ کا بھی زیادہ استعمال کرنے کی اطلاعات ملی ہیں ۔ ان نشیلی ممنوعہ اشیاء کو آن لائین کے ذریعہ بک کرتے ہوئے کورئیر کے ذریعہ حیدرآباد کو منگانے کا بھی پتہ چلا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT