Sunday , October 22 2017
Home / Top Stories / مودی ، امیت شاہ جوڑی کو اپنے ہی میدان پر پسپائی کا سامنا

مودی ، امیت شاہ جوڑی کو اپنے ہی میدان پر پسپائی کا سامنا

گجرات اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کو 60 اور کانگریس کو 100 نشستیں: آر ایس ایس کا سروے

حیدرآباد۔/20ستمبر، ( سیاست نیوز) آر ایس ایس کے سروے نے گجرات میں بی جے پی کے ہوش اُڑادیئے ہیں۔20سال سے گجرات پر راج کرنے والی بی جے پی کو صرف 52 تا 60 سمبلی حلقوں پر کامیاب ہونے کی پیش قیاسی کی گئی ہے جبکہ کانگریس کے کھاتے میں 100سے زیادہ حلقے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ آر ایس ایس کی سروے رپورٹ ملنے کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی اور بی جے پی کے قومی صدر امیت شاہ کے پیروں تلے زمین کھسک گئی ہے کیونکہ 2014 کے عام انتخابات میں گجرات کی ترقی کو دکھاکر نریندر مودی نے عوام سے ووٹ طلب کئے تھے۔ گجرات ماڈل کے طرز پر ہندوستان کو ترقی دینے کا اعلان کیا تھا لیکن اسی گجرات میں بی جے پی کا کمزور موقف ظاہر ہونے کے بعد غلطیوں کی اصلاح اور سیاسی نقصان کی پابجائی کے طور پر ترقی دکھانے کیلئے جاپان کے وزیر اعظم کو مدعو کرتے ہوئے بلٹ ٹرین کا سنگ بنیاد رکھا گیا اور سردار سرور پراجکٹ کا بھی افتتاح کیا گیا۔ حال ہی میں منعقدہ مقامی اداروں کے انتخابات میں 31 کے منجملہ 23 اضلاع پنچایت اور 193 کے منجملہ 113 تعلقہ پنچایتوں میں کانگریس کو کامیابی حاصل ہوئی تھی۔ ساتھ ہی گذشتہ عام انتخابات میں 20 سے زائد بی جے پی کے ارکان اسمبلی 5 ہزار سے بھی کم اکثریت سے کامیاب ہوئے تھے، ان تمام اعداد و شمار کا آر ایس ایس کی سروے رپورٹ میں تذکرہ کیا گیا ہے۔ ایک یا دو فیصد ووٹوں کے ادھر اُدھر سے بی جے پی کی کشتی ڈوب جانے کا بھی انتباہ دیا گیا ہے۔ بی جے پی کی 20 سالہ حکمرانی سے مخالف لہر پائی جارہی ہے اور پٹیل ریزرویشن کا مسئلہ بھی بی جے پی کیلئے نقصاندہ ثابت ہورہا ہے۔ ایشس ٹھاکر کی قیادت میں تشکیل دیا گیا او بی سی ایکتا منچ بی جے پی کیلئے درد سر بنا ہوا ہے۔ گجرات کے ایک مقام یو پی کے علاقہ اناؤ میں گاؤ رکھشکوں نے دلتوں پر حملہ کیا تھا جس سے 9 فیصد دلت ووٹ بی جے پی سے دور ہوگئے ہیں۔ گذشتہ انتخابات میں بی جے پی کی تائید کرنے والے مسلمانوں کا جھکاؤ اس مرتبہ کانگریس کی طرف ہے۔ جی ایس ٹی نافذ کرنے کی ٹیکسٹائیل صنعت کار شدید مخالفت کررہے ہیں۔ آنندی بین پٹیل اور وجئے روپانی کے دور حکومت کی بدعنوانیاں بالخصوص جی ایس پی سی اسکام، تالائی اسکام، گرین فوڈ، ریزارٹ لینڈ اسکام، میٹرو اسکام بی جے پی کو لے ڈوب سکتے ہیں۔ گزشتہ عام انتخابات میں عوام سے کئے گئے وعدے50 فیصد بھی مکمل نہیں ہوئے ہیں۔

 

TOPPOPULARRECENT