Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / مودی حکومت پر دارجلنگ احتجاج کی حوصلہ افزائی کا الزام

مودی حکومت پر دارجلنگ احتجاج کی حوصلہ افزائی کا الزام

مرکز مزید فورس روانہ کرے : ممتا بنرجی ، وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ کا ربط
ممبئی / کولکتہ ۔ 17 ۔ جون : ( سیاست ڈاٹ کام ) : دارجلنگ ہلز میں گورکھا لینڈ کے لیے جاری احتجاج کے دوران چیف منسٹر مغربی بنگال نے مودی حکومت پر احتجاج کی حوصلہ افزائی کا الزام عائد کیا اور دعویٰ کیا کہ اس کے پس پردہ گہری سازش ہے ۔ انہوں نے پرتشدد احتجاج کے لیے راست بی جے پی کو مورد الزام قرار نہیں دیا ۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ شمال مشرقی کے بعض باغی گروپس اور چند بیرونی ممالک کی انہیں تائید حاصل ہے ۔ ممتا بنرجی کے ریمارکس پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے صدر بی جے پی امیت شاہ نے کہا کہ چیف منسٹر مغربی بنگال کو ہر معاملہ میں سازش دکھائی دیتی ہے ۔ ممتا بنرجی نے کہا کہ بدامنی کے دوران جس طرح کی غنڈہ گردی اور لوٹ مار دیکھی جارہی ہے یہ اسی وقت ہوسکتی ہے جب پس پردہ کوئی دہشت گرد دماغ کارفرما ہو ۔ مرکز کو اس صورتحال سے نمٹنے کے لیے ریاست کی ممکنہ مدد کرنی چاہئے ۔ آج جو کچھ ہورہا ہے وہ گہری سازش ہے ۔ کئی بم اور اسلحہ ایک دن میں جمع نہیں ہوسکتے ۔ یہ پہلے سے جمع کیے جاتے رہے ہیں ۔ حکومت مغربی بنگال نے مرکز کو مکتوب تحریر کرتے ہوئے جاری بدامنی سے نمٹنے کے لیے مزید فورس روانہ کرنے کی خواہش کی ۔ ممتا بنرجی نے اس درخواست کو معمول کی کارروائی قرار دیا ۔ محکمہ داخلہ کے ایک سینئیر عہدیدار نے کہا کہ ہم نے مرکز سے مزید فورس بھیجنے کی درخواست کی اور آج مزید ایک اپیل روانہ کی گئی ۔ اس دوران مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے چیف منسٹر ممتا بنرجی سے ربط قائم کرتے ہوئے تازہ صورتحال کے بارے میں تبادلہ خیال کیا ۔ فون پر ہوئی بات چیت میں چیف منسٹر نے مرکزی وزیر داخلہ کو لا اینڈ رآرڈر کی برقراری کے لیے ریاستی حکومت کے اقدامات سے واقف کرایا ۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ راج ناتھ سنگھ نے چیف منسٹر سے کہا کہ امن کی بحالی کے لیے تمام ممکنہ اقدامات کئے جائیں ۔۔
جی جے ایم مرکز سے بات چیت کے لیے آمادہ
دارجلنگ ۔ 17 ۔ جون : ( سیاست ڈاٹ کام ) : گورکھا جن مکتی مورچہ ( جی جے ایم ) نے حکومت مغربی بنگال سے کسی بھی طرح کی بات چیت کا امکان مسترد کردیا ۔ لیکن کہا کہ مرکز میں بی جے پی زیر قیادت حکومت کے ساتھ مذاکرات کے لیے وہ آمادہ ہے ۔ بی جے پی دراصل جی جے ایم کی حلیف ہے اور پارٹی رکن پارلیمنٹ ایس ایس اہلوالیہ نے 2014 لوک سبھا انتخابات میں دارجلنگ سے بی جے پی کی مدد سے کامیابی حاصل کی ۔ جی جے ایم لیڈر بنئے تمنگ نے کہا کہ حکومت مغربی بنگال کے ساتھ بات چیت کے لیے ہم تیار نہیں ۔ ممتا بنرجی نے ہماری توہین کی ۔ انہوں نے ہمیں دہشت گرد قرار دیا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT