Saturday , October 21 2017
Home / Top Stories / مودی سے ملاقات ترقیاتی امور پر تھی سیاسی نہیں

مودی سے ملاقات ترقیاتی امور پر تھی سیاسی نہیں

ریاست کو درپیش مسائل اور قرضہ جات کی صورتحال پر بات چیت ‘ ممتابنرجی کا بیان
نئی دہلی 25 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) چیف منسٹر مغربی بنگال ممتابنرجی نے آج کہا کہ انہوں نے وزیر اعظم نریندر مودی کے ساتھ ترقیاتی مسائل پر تبادلہ خیال کیا ہے سیاست پر نہیں۔ ترنمول کانگریس سربراہ کی وزیر اعظم سے ملاقات ایسے وقت میں ہوئی ہیں جبکہ اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے مجوزہ صدارتی انتخاب میں اتفاق رائے سے امیدوار پیش کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے ۔ برسر اقتدار این ڈی اے کی جانب سے ابھی اپنے صدارتی امیدوار کے نام کا اعلان نہیں کیا گیا ہے ۔ ممتابنرجی نے وزیر اعظم سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ یہ کوئی سیاسی ملاقات نہیں تھی بلکہ خالصتا ترقیاتی امور پر ملاقات تھی ۔ انہوں نے کچھ مسائل کو وزیر اعظم کے ساتھ رجوع کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ در اصل ریاستی حکومت اورمرکز کے مابین روایتی اجلاس تھا ۔ ممتابنرجی نے نریندر مودی کی نوٹ بندی مہم کی شدت سے مخالفت کی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ انہوں نے مغربی بنگال کو درپیش کئی مسائل بشمول ریاستی قرضہ جات کے از سر نو تعین پر وزیر اعظم کے ساتھ بات چیت کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ فراکہ بیاریج ‘ بنگلہ دیش کی جانب سے مغربی بنگال سے روانہ کئے جانے والے آم پر بھاری ایکسپورٹ ڈیوٹی ‘ بنگلہ دیش کی جانب سے اترائی دریا پر ڈیم کی تعمیر جیسے مسائل پر نریندر مودی کے ساتھ بات چیت کی گئی ہے ۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ریاستی حکومت کو مرکز نے جو قرضہ جات جاری کئے ہیں ان کا دوبارہ تعین کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ ریاست معاشی مسائل سے دو چار ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ریاست سے مرکز کو 40,000 کروڑ روپئے ادا کرنے ہیں ۔ ایسی صورتحال میں ہم کس طرح کام کرسکیں گے ۔ ممتابنرجی نے مطالبہ کیا کہ مغربی بنگال سے سربراہ کئے جانے والے آم پر بنگلہ دیش کی جانب سے جو بھاری ایکسپورٹ ڈیوٹی لگائی گئی ہے اس مسئلہ کو بھی حکومت ہند ‘ بنگلہ دیش سے رجوع کرے ۔

TOPPOPULARRECENT