Thursday , September 21 2017
Home / Top Stories / مودی نے سپاہیوں کیساتھ دیوالی منائی، حوالدار عبدالحمید کو خراج عقیدت

مودی نے سپاہیوں کیساتھ دیوالی منائی، حوالدار عبدالحمید کو خراج عقیدت

The Prime Minister, Shri Narendra Modi laying wreath at the memorial of Abdul Hamid, PVC, at Asal Uttar, in Punjab on November 11, 2015.

سپاہیوں کے کردار و بہادری کی ستائش ،فوج کا دِل جیتنے کی کوشش، ہند ۔ پاک سرحد کے قریب تین جنگی یادگاروں کا دورہ

امرتسر ۔  فیروز پور ۔ /11 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے لگاتار دوسرے سال بھی فوجی سپاہیوں کے ساتھ آج دیوالی منائی ۔ اس موقع پر انہوں نے 1965 ء کی ہند ۔ پاک جنگ سے تعلق رکھنے والے تین فوجی مقامات کا دورہ کیا اور سپاہیوں کے کردار و شجاعت کی بھرپور ستائش کرتے ہوئے وعدہ کیا کہ سینئر سپاہیوں کیلئے ’’ایک رتبہ ایک وظیفہ ‘‘ کسی نقص کے بغیر عمل آوری کی جائے گی ۔ ’’ ایک رتبہ ایک وظیفہ ‘‘ ( او آر او پی) کے سوال پر سابق فوجیوں کے مسلسل احتجاج کے تناظر میں مودی نے کہا کہ یہ پہلا موقع ہے کہ حکومت نے اس اسکیم پر عمل آوری کا فیصلہ کیا اور اس عمل میں نقائص کو دور کرنے کیلئے ایک کمیشن کرنے کا اعلان کیا گیا ۔ وزیراعظم نے کہا کہ ’’یہ نقائص سے پاک انتظام ہوگا ‘‘ ۔ انہوں نے دفاعی شعبہ میں آلات و اوزار کی اندرون ملک تیاری کی ضرورت پر بھی ازسرنو زور دیا ۔ مودی نے ضلع فیروز پور میں بارکی جنگی یادگار ، والٹوہا کے قریب اصل اترجنگی یادگار ، خاصہ میں ڈو گرئی جنگی یادگار جیسے ہند ۔ پاک سرحد کے قریب واقع تین فوجی تنصیبات کا اچانک دورہ کرتے ہوئے سپاہیوں سے بات چیت کی ۔ امرتسر کے خاصہ میں دوگرائی جنگی یادگار پر انہوں نے پھول چڑھایا جہاں سخت لڑائی کے بعد /22 ستمبر 1965 ء کو ہندوستان نے تاریخی فتح حاصل کی تھی ۔ انہوں نے پنجاب میں امرتسر ۔ کھیج کرن روڈ پر والوٹاہا کے قریب اصل اترجنگی یادگار پر بھی پھول چڑھایا ۔ وزیراعظم نریندر مودی نے پرم ویرچکرا ایوارڈ یافتہ کمپنی کوارٹر ماسٹر حوالدار عبدالحمید کو خراج عقیدت پیش کیا ۔ اس موقع پر مودی نے حوالدار عبدالحمید کے کارنامہ کو یاد دلایا کہ 1965 ء میں اصل اتر محاذ پر پاکستان کے خلاف جنگ کے دوران حوالدار عبدالحمید نے جان لیوا حد تک زخمی ہوجانے کے باوجود تن تنہا انتہائی بہادری کے ساتھ مقابلہ کیا کرتے ہوئے دشمنوں کی تین توپوں کو تباہ کردیا تھا اور اس طرح دشمن حملہ روکا جاسکا ۔ مودی نے ٹوئیٹر پر بھی لکھا کہ ’’کمپنی کوارٹر ماسٹر حوالدار عبدالحمید کو خراج عقیدت ادا کیا ۔ جنہیں بعد از مرگ پرم ویر چکرا ایوارڈ بھی دیا گیا ہے ‘‘ ۔ اصل اتر یادگار دراصل  اتر جنگ کی نشانی نے جو 1965 ء کے دوران ہندوستانی علاقہ میں لڑی گئی توپوں کی ایک سب سے بڑی لڑائی بھی ہے ۔ مودی نے خاصہ سے تقریباً 98کیلو میٹر دور واقع برکی جنگی یادگار پر بھی سپاہیوں سے ملاقات کی ۔ یہ یادگار ساتویں انفینٹری ڈیویژن کے ان سپاہیوں کی یاد میں بنائی گئی ہے جنہوں نے 1965 ء کی جنگ میں عظیم قربانی دی تھی ۔ مودی نے فیروز پور میں سپاہیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’حالیہ عرصہ کے دوران دفاعی شعبہ میں ملک نے کئی اہم فیصلے کئے ہیں ۔ ہندوستان کی یہ خواہش ہے کہ دفاعی آلات و اوزار اندرون ملک ہی تیار کیا جائیں ‘‘۔

TOPPOPULARRECENT