Tuesday , September 19 2017
Home / سیاسیات / مودی نے قومی پرچم کی بے حرمتی کی

مودی نے قومی پرچم کی بے حرمتی کی

نئی دہلی ۔ 6 اپریل (سیاست ڈاٹ کام)دہلی کی ایک عدالت نے قومی پرچم کی مبینہ بے حرمتی سے متعلق وزیراعظم نریندر مودی کے خلاف آج ایک شکایت پر نوٹ لیا ہے۔ یہ واقعہ گذشتہ سال مودی کے دورہ امریکہ کے دوران بین الاقوامی یوم یوگا کی تقریب میں قومی پرچم کشائی کے موقع پر پیش آیا تھا۔ میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ سگندھا سرواریا نے اس تقریب کے بارے میں شہادتوں کی قلمبندی کا حکم دیتے ہوئے کہاکہ ’’میں نے اس شکایت کا نوٹ لیا ہے۔ اس مقدمہ کی آئندہ پیشی 9 مئی کو مقرر کی جاتی ہے‘‘۔ شکایت گذار اشیش شرما نے مودی کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کیلئے پولیس کو ہدایت دینے کی درخواست کی تھی ۔انہوں نے یہ دعویٰ بھی کیا کہ مودی نے ایک بار نہیں بلکہ کئی مرتبہ قومی پرچم کی توہین کی ہے۔ شرما نے الزام عائد کیا کہ وزیراعظم نے انڈیا گیٹ پر منعقدہ بین الاقوامی یوم یوگا کی تقریب میں قومی پرچم کو دستی (رومال) کے طور پر استعمال کرتے ہوئے اس کی بداحترامی کی تھی۔ شکایت میں مزید کہا گیا ہیکہ ’’انہوں (مودی) نے امریکہ کے صدر بارک اوباما کو ہندوستانی قومی پرچم کی پیشکشی کے موقع پر بھی پھر ایک مرتبہ لاپرواہی کی تھی جب انہوں نے قومی پرچم پر اپنی دستخط کی تھی جو 2002ء کے قومی پرچم ضابطہ کے خلاف ہے‘‘۔

صدر بی جے پی کا قوم پرست شبیہہ پر اصرار
نئی دہلی ۔ 6 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) قومی صدر بی جے پی امیت شاہ نے آج پارٹی کارکنوں کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ انہیں پنچایت انتخابات سے پارلیمنٹ انتخابات تک آئندہ 25 سال تک کامیاب ہونا چاہئے۔ وہ پارٹی کے قیام کے 36 سال کی تکمیل پر کارکنوں سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ آج بی جے پی جو کچھ ہے وہ پارٹی کارکنوں کی 3 پشتوں کی قربانیوں کا نتیجہ ہے جنہوں نے پارٹی کے نظریہ اور بھارت ماتا کے تحفظ کیلئے جدوجہد کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی کارکنوں کو یہ بات یاد رکھنی چاہئے اور اپنے پرکھوں کی قربانیوں کو ضائع نہیں ہونے دینا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے اقتدار کا مقصد غریبوں، پسماندہ طبقات کو بااختیار بنانا ہے۔ انہوں نے پارٹی کارکنوں سے کہا کہ وہ حکومت عوام کے درمیان حائل خلیج کو دور کرنے کیلئے سخت جدوجہد کریں ۔ ہر غریب کیلئے ایک چراغ جلائیں۔

TOPPOPULARRECENT